Latest Notifications : 
    داعی توحید نمبر

اظہار تشکر

Date : Friday 2nd of February 2024 02:26:40 AM

اظہار تشکر

حال ہی میرے تایا جان کا انتقال ہوا ۔ میرے تایا جان بڑے ہی شریف النفس اور انسان دوست انسان تھے اور ہمارے لیے ہمارے باپ کے مانند تھے کیونکہ ایک حدیث میں ہے 
عَنْ أَبِي هُرَيْرَةَ أَنَّ رَسُولَ اللَّهِ صَلَّی اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ قَالَ: الْعَبَّاسُ عَمُّ رَسُولِ اللَّهِ، وَإِنَّ عَمَّ الرَّجُلِ صِنْوُ أَبِيهِ۔
(ترجمہ )حضرت ابوہریرہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے روایت ہے کہ نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا ،حضرت عباس اللہ کے رسول صلی اللہ علیہ وسلم کے چچا ہیں۔ اور چچا باپ کی طرح ہوتا ہے۔
 میرے والد محترم کے ساتھ انکی کافی شفق...


ڈاکٹر قاضی نثار کے ہمراہ علماء کی جماعت کی عیادت اور افادات مجلس

Date : Tuesday 23rd of January 2024 04:32:00 PM

*ڈاکٹر قاضی نثار صاحب اورعلماء کی جماعت کی عیادت*
ڈاکٹر  قاضی نثار احمد کے ہمراہ علماء کرام کی ایک جماعت جو احمد آباد گجرات سے تعلق رکھتی تھی آج یعنی اکیس جنوری  2024  صبح دس بجے والد محترم کی عیادت کے لیے پہنچی ۔ ڈاکٹر قاضی نثار احمد صاحب ضلع راجوری سے تعلق رکھتے ہیں ۔ یہ ندوہ سے فارغ التحصیل عالم ہونے کے ساتھ ساتھ عربی میں ڈاکٹریٹ بھی ہے ۔ اللہ تعالی نے موصوف کو کافی علمی اور تحقیقی صلاحیت سے نوازا ہے۔ محترم موصوف علمی مصروفیت کے علاؤہ دعوتی سرگرمیوں میں بھی بڑھ چڑھ کر حصہ لے رہے ہیں۔ سب سے بڑی چیز جو موصوف کی شخصیت کا امتیاز ہے ،وہ تحذب سے پاک ذہن ہے اور نیک امور میں بلا امتیاز مسلک و فکر ہر کسی کی اعانت کر...


التصريح بما تواتر في نزول المسیح  -  ایک تعارف (قسط سوم)  

Date : Thursday 18th of January 2024 12:01:18 PM

 التصريح بما تواتر في نزول المسيح  -  ایک تعارف 

( قسط - 3)

کتاب کی ابتداء میں محققِ کتاب شیخ عبد الفتاح أبوغدہ کا کتاب کی تیسری اشاعت پر لکھا ہوا ایک پیش لفظ ہے - اس میں وہ لکھتے ہیں کہ اس کتاب کی وجہِ تصنیف مصنف کے نزدیک یہ تھی کہ ایک گمراہ فرقہ " قادیانیہ" کے کفر و ضلالت اور ملّتِ اسلامیہ سے خارج ہونے کی وجوہات سے پردہ کشائی کی جائے جیسا کہ علامہ کشمیری رحمہ اللہ کے شاگرد مفتی محمد شفیع عثمانی رحمہ اللہ نے اپنے مقدمے میں اس کی تفصیل دی ہے - پھر انہوں نے اُن اسباب پر بھی روشنی ڈالی ہے جنہوں ...


صوفیاء کی شان میں بے ادبی کرنا گمراہی ہے

Date : Sunday 7th of January 2024 07:16:32 PM

صوفیاء کی بے ادبی گمراہی ہے 
تعلیم یافتہ نوجوانوں میں تحقیق کا بڑھتا رحجان ایک خوش آئند بات ہے۔ اللہ تعالیٰ نے جہاں انسان کو کافی صلاحیتوں سے نوازا ہے وہیں ایک صلاحیت جو انسان کو دوسرے حیوانوں سے ممتاز بنا دیتی ہے وہ عقل ہے۔یہی وہ نعمت ہے جس سے آدمی حق اور ناحق میں امتیاز کرتا ہے۔اور اسی قوت تعقل کو بروئے کار لاکراشیاء کی حقیقت تک پہنچنے کے عمل میں تفتیش کرنے کا نام تحقیق ہے۔ حضور صلی اللہ علیہ وسلم سے دعا منقول ہے کہ اللھم ارنا الحقائق الشیاء کما ھی۔یعنی اے اللہ مجھے اشیاء کی حقیقت سے آگاہ کیجیے جیسے کہ وہ ہیں۔تحقیق کا کام بہت مشکل کام  ہوتا ہے اس کے لیے ویسی صلاحیت ہونی چاہیے جس سے آدم...


التصریح بما تواتر فی نزول المسیح - ایک تعارف قسط دوم

Date : Saturday 6th of January 2024 02:20:11 PM

" التصریح بما تواتر فی نزول المسیح" - ایک تعارف

(قسط - 2)

 

میرے سامنے کتابِ ہذا کا جو نسخہ ہے وہ شركة دار البشائر الإسلامية - بیروت سے شائع شدہ ہے - یہ کتاب کا چھٹا ایڈیشن ہے جو 2005 میں منظر عام پر آیا ہے - پوری کتاب پونے چار سو سے کچھ زائد صفحات پر مشتمل ہے - کتاب کے پہلے صفحہ پر چند قرانی آیات درج ہیں جن سے علمائے اہلسنت والجماعت نے سیدنا عیسیٰ علیہ السلام کی حیات اور نزول پر استدلال کیا ہے - اس کی تفصیل آگے آتی ہے - پھر محققِ کتاب کا دوسری اشاعت پر ایک مختصر پیش لفظ ہے- اس کے بعد مح...


التصريح بما تواتر في نزول المسيح - ایک تعارف

Date : Monday 1st of January 2024 12:17:57 PM

 التصریح بما تواتر فی نزول المسیح  - ایک تعارف
( قسط 1)

تمہید 

کتابِ ہذا عالَمِ اسلام کے مایہ ناز فقیہ ' محدث ' ادیب' مصنف ' عربی کے بلند پایہ شاعر ' صوفی ' زاہد امام انور شاہ المسعودی الکشمیری رحمہ اللہ کی تصنیف ہے - اس پر تحقیق ' تخریج اور تعلیق کا کام عالَمِ عرب کے معروف ربانی عالِم ' محدث' ادیب شیخ عبد الفتاح ابوغدہ رحمہ اللہ نے انجام دیا ہے اور اس کو مفتی اعظم پاکستان اور امام انور شاہ کشمیری رحمہ اللہ کے شاگردِ رشید مفتی محمد شفیع عثمانی رحمہ اللہ نے مرتب کیا ہے - میرے خیا...


اسلام کے آفاقی اصول ہی ہمارے اسلاف کا مسلک تھا

Date : Monday 1st of January 2024 11:57:19 AM

اسلام کے آفاقی اصول ہی اسلاف کا مسلک تھا 

ز اجتہاد عالمان کم نظر 
اقتدا بر رفتگاں محفوظ تر 
یہ علامہ اقبال رحمہ اللہ کا شعر ہے ۔ اس شعر میں علامہ رفتگان یعنی اسلاف کی اقتداء کرنے کو ایمانی اعتبار سے محفوظ تر بتاتے ہیں۔ اس کے کئی وجوہ ہو سکتے ہیں ایک وجہ یہ کہ ان کی تحقیق کا مقصد احقاق حق ہوتا تھا اور وضوح حق کے بعد  پھر اس کے مطابق عمل کرتے تھے ۔ وہ اپنی تحقیق کو بایں معنی قابل عمل سمجھتے تھے کہ وہ اس میں اقرب الی الصواب ہونے کے تمام اوصاف تحقیقی شرائط کے ساتھ پاتے تھے۔ لہذا وہ اپنے آپ کو صواب پر سمجھتے ہوئے دوسروں کی تحقیق کو یکسر رد ...


امام صاحب کا فقہی منہج قرآن،سنت،تعامل صحابہ اور پھر قیاس(اجتھاد)

Date : Wednesday 20th of December 2023 03:59:36 PM

امام صاحب کا فقہی منہج قرآن،سنت،تعامل صحابہ اور پھرقیاس(اجتھاد)

ابو عبد اللہ امام سفیان ثوری رحمہ اللہ ایک بڑے پایہ کے فقیہ و محدث تھے ۔ وہ امام ابوحنیفہ رحمہ اللہ کے معاصرین میں سے تھے ۔انہوں نے ضبط و روایت میں اس قدر شہرت پائی کہ شعبہ بن حجاج ، سفیان بن عیینہ اور یحیی بن معین جیسے محدثین نے آپ کو امیر المومنین فی الحدیث کے لقب سے سرفراز کیا ہے۔ ان کے زہد و ورع اور ثقاہت پر سب کا اتفاق ہے۔جن ائمہ فقہ وحدیث کوزمرۂ تبع تابعین کا گل سرسبد کہا جاسکتا ہے، ان میں ایک امام سفیان ثوری رحمہ اللہ بھی ہیں علم وفضل کے لحاظ سے ان کا شمار ان ائمہ مجتہدین میں ہوتا ہے جوایک ...


سلطان الحق شہیدی کی یاد میں

Date : Saturday 16th of December 2023 04:54:29 PM

مجلس علمی جموں وکشمیر کی تعزیت بروفات سلطان الحق شہیدی مرحوم


بندہ ناچیز کا محبوب دوست مرحوم مرغوب بانہالی صاحب ایک دین پسند ادیب اور شاعر ہونے کے علاوہ ایک زبردست عالم دین بھی تھے کئی دفعہ جب میں زیارت اور کچھ استفادہ کی غرض سے اُن کے پاس جاتا تھا تو شہیدی صاحب کے ساتھ وہاں ضرور ملاقات ہوتی تھی اور مرحوم مرغوب صاحب اکثر فرماتے تھے کہ مجھے زندگی میں دوست تو ملا لیکن پیرانہ سالی میں ۔ایک دفعہ میں اور شہیدی صاحب اکٹھے ان کے پاس بیٹھے تھے مرغوب صاحب نے فرمایا کہ یہ میرے دوست شہیدی صاحب ہیں اور وہ بھی کوئی ادبی شہہ کار لے کر حاضر ہوتے تھے۔اس سے پہل...


سلطان الحق شہیدی ۔شعری ثقافت کا آخری باب

Date : Saturday 16th of December 2023 01:39:12 PM

 سلطان الحق شہیدی  - شعری ثقافت کا آخری باب 

سلطان الحق شہیدی کشمیری'  اردو اور فارسی شاعری کے تہذیبی سفر میں ایک اہم ترین سنگ میل کی حیثیت رکھتے تھے- ان کے کلام میں جہاں ایک طرف کلاسیکی شعراء کی بازگشت سنائی دیتی ہے وہیں دوسری طرف انہوں نے عصری احساسات کی ترجمانی کا بھی حق ادا کیا- وہ ہمارے شعری منظر نامے کے ایک کہنہ مشق شاعر تھے جو فنِ شعر پر اپنے تبحر کے ساتھ ساتھ فکر و نظر کی سلامتی' پاکیزگی اور طہارت کا رمز بھی تھے 
ترقی پسندی کے زمانہِ عروج میں بھی انہوں نے اپنی صالح قدروں سے گریز نہیں کیا- اسی لیے ان کا کلام وقتی اور عارض...


شعر و شاعری کی تاریخ اسلامی نکتہ نگاہ کی روشنی میں

Date : Monday 27th of November 2023 04:02:36 AM

شعر وشاعری کی تاریخ اسلامی نکتہ نگاہ کی روشنی میں

بسم اللّٰہ الرحمٰن الرحیم
کفر ٹوٹا خدا خدا کرکے
لایا اس بت کو التجا کرکے
سب سے پہلے میں جناب محقق عصر ڈاکٹر شکیل صاحب کا شکریہ ادا کرتا ہوں کہ انہوں نے میری گذارش پر غور فرماکر مجلس علمی جموں وکشمیر کے گروپ میں ۔۔۔احسن الشعراکذبہ ۔۔۔کی معنوی جہتیں کے عنوان سے دماغ سوز مضمون سینڈ فرمایا ۔
میں نے تقریباََ تیس سال قبل وادی شعر وشاعری کو خیر باد کیا ھے ۔
لہذا میرے لیے اس مضمون میں کوئِی سوغات نہیں ھے کیونکہ مثل مشہور ھے
لکل فن رجال
لیکن میرے عزیزاں گرامی قدر میرے عجیب وغریب قدر دان ہی...


احسن الشعر اکذبہ کی معنوی جہتیں

Date : Sunday 26th of November 2023 11:27:29 AM

" أحسن الشعر أکذبه " کی معنوی جہتیں

رسمی طالب علمی کے زمانے میں' اس سبب سے کہ شاعری سے غایت درجہ شغف تھا' أحسن الشعر أكذبه ( سب سے بہترین شعر وہ ہوتا جو جھوٹ پر مبنی ہو) سے بڑی پریشانی لاحق ہوتی تھی- مذہبی پسِ منظر رکھنے کی وجہ سے خواہش یہی رہتی تھی کہ یہ قول شعری منظر نامے میں موجود نہ رہے کیونکہ اس قول کی حقیقی معنوی جہتوں کو نہ سمجھنے کی وجہ سے بڑے کبار مرتاض بزرگ شعراء کو جھوٹا ماننا لازم آتا تھا- ایک مدت تک یہ قول فکر و نظر میں کھٹکتا رہا اور اسے نقل کرنے میں بھی حد درجہ بخل برتتا رہا لیکن رہوارِ عمر کے آگے بڑھنے کے ساتھ ساتھ اس کی معنوی جہتیں بھی کھل...


امام ابو بکر جصاص رح کا تفسیری منہج قسط چہارم

Date : Saturday 28th of October 2023 01:49:54 PM

" امام ابوبکر جصاص کا تفسیری منہج " - ( قسط 4) 

(گزشتہ سے پیوستہ)

ڈاکٹر صفوت مصطفیٰ نے امام ابوبکر جصاص کے تفسیری منہج کی نو بنیادوں میں دوسری بنیاد تفسیر بالماثور اور تفسیر بالرائے کے درمیان جمع و تطبیق کو قرار دیا ہے- تفسیر بالماثور کے اُن کے نزدیک چار مصدر ہیں: 

قرآن کریم - سنت نبوی- اقوال صحابہ - اقوال ِ تابعین

پھر چاروں مصادر کی وضاحت کی ہے-


آسی غلام نبی ایک عہد ایک دبستان

Date : Saturday 30th of September 2023 06:30:30 AM

مولانا غلام نبی آسی زید مجدہ ( موسس و بانی مجلس علمی جموں و کشمیر ) 
     ( ایک عہد ، ایک دبستان )
_________________________
شمع ہر رنگ میں جلتی ہے سحر ہونے تک 
________________________
  آج کے مادی اور صارفینی کلچر کے دور میں جہاں انسانی زندگی کا ہر شعبہ اخلاقی اور روحانی ہبوط کا شکار ہے ، اس اخلاقی اور روحانی ادبار کے غیر معمولی ارتسامات علمی حلقے پر بھی دیکھنے کو ملتے ہیں _ کچھ علم کو محض مناقشہ و مناظرہ کا ذریعہ سمجھتے ہیں ، کچھ حصول زر کا ذریعہ ، کچھ علم کو خودنمائی و خودپسندی کا موجب مانتے ہیں ، اور کہیں علم ایسے علماء کے ہاتھ میں آگیا ہے ، جہاں علم اپنے تقدس اور حرمت کو پامال دیکھ کر لرزاں و ترساں ہیں ___ ایس...


مولانا بٹھوی مرحوم کی تفسیر القرآن الکریم پر ایک نظر

Date : Friday 15th of September 2023 02:05:50 PM

مولانا بٹھوی مرحوم کی " تفسیر القرآن الکریم " پر ایک نظر

قسط (2) 

 انہوں نے لکھا ہے کہ میں نے لفظی ترجمہ اس طرح کیا ہے کہ حتی الامکان آیت کے ہر لفظ کا ترجمہ آئے نیز اسے اردو محاورے کے مطابق بنانے کی کوشش بھی کی ہے- مولانا نے ترجمہ کرنے میں جو طریقہ اختیار کیا ہے اس کے بارے میں لکھتے ہیں:

" عربی زبان میں کچھ اوزان معنیٰ میں مبالغہ کے لیے وضع کیے گئے ہیں مثلاً قادر اور قدیر ' عالِم اور علیم کے معنیٰ میں فرق ہے مگر اکثر تراجم میں قدیر کا ...


مولانا عبد السلام بٹھوی مرحوم کی "تفسیر القرآن الکریم"پر ایک نظر

Date : Wednesday 13th of September 2023 06:17:45 AM

مولانا عبدالسلام بٹھوی مرحوم کی " تفسیر القرآن الکریم " پر ایک نظر 

قسط  (۱) 

قرآن کریم کی تفسیر کا سلسلہ خود رسول محترم صلی اللہ علیہ وسلم کی ذات مقدس سے شروع ہوا - احادیث رسول (صلی اللہ علیہ وسلم) میں ایک معتدبہ حصہ قرآن کی تفسیر پر مشتمل ہے جبکہ اپنے وسیع تناظر میں آنحضرت ﷺ کی پوری حیات طیبہ قرآن کی تفسیر و تشریح اور تعبیر و توضیح پیش کرتی ہے- لہذا کہا جا سکتا ھے کہ تفسیر کا سلسلہ نزولِ قرآن کے ساتھ ہی شروع ہوا ہے- پہلی صدی سے لیکر تایں دم دنیا کی تقریباً ہر زبان میں تراجم و تفاسیر قرآن کا ...


علمی مجلس کا علمی تجزیہ

Date : Monday 4th of September 2023 01:10:47 PM

بسم اللّٰہ الرحمٰن الرحیم

مجلسِ علمی ۔۔۔۔فتح گڈھ بارہمولہ ۔۔۔۔کی حالیہ دینی تقریب سعید کی جو مکمل روداد فاضل جلیل القدر ڈاکٹر شکیل شفائی صاحب نے قلمبند کی ھے ۔وہ ایک دلچسپ داستان ھے۔اس تقریب کا طرۂ امتیاز بزرگ دینی رہنما جناب حضرت مولانا الحاج غلام نبی صاحب آسی شاگرد رشید حضرت مولانا سید ولی شاہ حسنی نارنتھلی علیہ الرحمۃ کے سر ھے جنہوں نے اپنے رفقاء کرام کے ساتھ اس علمی تقریب کا اہتمام کیا تھا ۔ تقریب میں مختلف مکاتب فکر دیوبندی۔بریلوی ،سلفی،تحریک اسلامی ،انجمن تبلیغ الاسلام کے پیر محمد یحییٰ صاحب شیری،اراکین مجلس علمی ،سر کردہ علمی شخصیات،بشمول صدر محترم مولانا پرےصاحب کی شمولیت نے ...


مثبت دعوت اور اس کا طریقہ کار پر مجلس علمی کا یک روزہ علمی مذاکرہ

Date : Wednesday 16th of August 2023 02:46:11 PM

" مجلسِ علمی ( فتح گڈھ' بارہمولہ) کی دینی تقریب" 

مولانا شوکت حسین کینگ صاحب وادیِ کشمیر کے ان انگشت شمار علماء و فضلاء میں محسوب ہوتے ہیں جنہیں بالعموم برصغیر کی اور بالخصوص کشمیر کی دینی اور ثقافتی تاریخ پر گہری نظر ہے- مجلس علمی کے مؤسس جناب آسی غلام نبی وانی صاحب نے ( جو بلا لحاظ مسلک و مکتب علماء و فضلاء کے بڑے قدر دان ہیں) عرصہ ہوا خواہش ظاہر کی تھی کہ مولانا کو کسی تقریب میں فتح گڈھ مدعو کیا جائے- مولانا شوکت صاحب کو ماقبل ڈاکٹر غلام قادر لون صاحب (ہُدِی پورہ' بارہمولہ) سے ملاقات کرنے کا ارادہ تھا ' آسی صاحب نے اس کا یہ حل نکالا کہ اپنے ادارہ مجلس علمی کے صدر دفتر پر ایک دینی تق...


سفر نامہ خطہ پیر پنچال (قسط سوم)

Date : Monday 24th of July 2023 11:36:06 AM

قسط سوم
مغل روڈ کی وجہ تسمیہ یہ ہے کہ اس راستے سے مغل سلاطین وارد کشمیرہوتے تھے اور مختلف جگہوں پر سرائیں قائم کیں علی سرائے آج بھی اپنے آب و تاب  کے ساتھ موجود ہے لیکن حکمرانوں کی عدم توجہی کی داستان سنارہی ہے چند ثانیوں کیلئے ہماری گاڑی نے راحت کی سانس لی اورہم کھلی فضا میں قدرت کی کاریگری اور مغلوں کے فن تعمیر سے محظو ظ ہوگئے۔ اسی راستے پر  ایک اور سرائے سکھ سرائے کے نام سے موسوم ہے ہم کشمیری میں راحت اور آرام کیلئے سوکھ کا لفظ استعمال کرتے ہیں اور اردو میں سکھ چین بھی مستعمل ہے اور اس سرائے کی وجہ تسمیہ یہی ہے کہ یہاں پر مغل سلاطین اپنی لشکر اور بقیہ عملے کے ساتھ ...


سفرنامہ خطہ پیر پنچال(قسط دوم) 

Date : Sunday 2nd of July 2023 09:22:49 AM

(قسط دوم) 
گذشتہ سے پیوستہ 
اور اس علاقے کا ایک المیہ بھی ہے کہ یہاں کی پیدوار
مولوی عبد اللہ وکیل ہیں جو قادیانیوں کے لاہوری گروپ سے تعلق رکھتے تھے انکے فرزند شمیم احمد شمیم (ایڈیٹر اخبارآئینہ سرینگر) بھی قادیانیت سے متاثر تھے۔ مولانا سید حسین شاہ صاحب


حج اور ابراہیمی خانوادہ

Date : Wednesday 28th of June 2023 11:24:33 PM

حج اور ابراھیمی خانوادہ

قوموں اور ملّتوں کی تعمیر و تشکیل میں خاندانوں کی قربانی بڑی معنیٰ خیز اور دور رس نتائج کی حامل ہوتی ہے۔ حضرت ابراہیم (ع) اور ان کے خانوادے نے اللہ کی راہ و رضا میں جو قربانیاں دیں انہوں نے پوری دنیا میں توحیدی تہذیب و تمدن کی بنیادوں کو پائیدار و استوار کیا۔دنیا میں کئی خاندان ایسے تھے جنہوں نے بڑی بڑی بادشاہتیں قائم کیں۔کئی رہنما ایسے اٹھے جنہوں نے اپنے گھر،خاندان اور قبیلے کے لیے دولت و سیادت اور ثروت و قیادت کا وہ نظام قائم کیا جو سینکڑوں ہزاروں سال تک عوام الناس کی گردنوں پر مسلط رہا جن میں عیش عشرت کے دریا پوری آب و تا...


سفر نامہ پیر پنچال

Date : Monday 19th of June 2023 02:35:48 PM

سفرنامہ خطہ پیر پنچال۔ 
''قسط اول''
از مولانا غلام محمد پرے صاحب
(لاوے پورہ سرینگ
ر)

مجلس علمی جموں و کشمیر ایک علمی تحریک ھے اور اسکے محرک و مؤسس محترم غلام نبی آسی صاحب فتح گڑھی ہیں۔ حضرت والا ماہر تعلیم بھی ہیں اور محکمہ تعلیم میں ایک بڑے عہدے پر فائز رہے ہیں۔ اس علمی تحریک کو وسعت سے ھمکنار کرنے کیلئے حضرت نے خاکسار کو حکم فرمایا کہ خطہ پیر پنچال میں بھی مجلس علمی کو متعارف کرنے کیلئے ایک سفر کیا جائے۔ خاکسار نے حکم کی تعمیل کیل...


اصحاب ثروت تحریکوں کے دینی مزاج کو بگاڑتے ہیں

Date : Friday 16th of June 2023 03:46:20 PM

محبت انسان کی فطرت میں ہے ۔ اس کے دل میں کوئی نہ کوئی چیز اس طرح گھر کر جاتی ہے کہ انسان کا خود کو اس سے علاحدہ کرنا ناممکن بن جاتا ہے ۔ اس  حوالے سےانسانوں میں چار قسم کے لوگ پائے جاتے ہیں۔ایک طبقہ وہ ہے جن کے قلوب میں مال کی بے انتہا محبت ہوتی ہے اور وہ اسی زاوئے سے غلط اور صحیح کا تعین کرتے ہیں اور ان کی تمام تر ترجیحات اس کے ارد گرد گھومتی ہیں ۔ مال سے اس قسم کاشدید محبت حب مال کہلاتا ہے ۔ دوسرا طبقہ وہ ہے جن کوشہرت مال سے زیادہ عزیز ہوتی ہے ان لوگوں کو  شہرت حاصل کرنے  کے لیےاگر  اپنا مال بھی قربان کرنا پڑے تو بے دریغ کرتے ہیں اور یہ مال کا زیاں ان کے یہاں کوئی معنی ہی نہیں رکھتا کیونکہ ان کی ترجیح جاہ ...


پوچھ کر چلو

Date : Tuesday 13th of June 2023 11:13:21 AM

"پوچھ کر چلو "
پوچھ کر چلو ایک ایسا جملہ ہے جو سراسر حکمت پر مبنی ہے- لیکن سوال پیدا ہوتا ہے کہ کن سے پوچھ کر چلنا ہے۔اس کا جواب یہ ہے کہ اہل علم اور مجرب لوگوں سے ۔ اس پر قرآن کریم کی آیت "فسعلوا اھل الذکر ان کنتم لاتعلمون"  بھی دلالت کرتی ہے۔تاہم آجکل مسلم معاشرےمیں اس چیز کو نظر انداز کیا جاتا ہے ۔ صحابہ رضی اللہ عنھم اجمعین کا سب سے بڑا وصف یہ تھا کہ وہ نبی علیہ السلام سے پوچھ کر ہرعمل کرتے تھے ۔وہ وہی عمل کرتے تھے جسکی تائید قول نبی ،فعل نبی یا تقریر(تائید) نبی سےہوتی تھی۔پوچھ کر چلنے کا زیادہ اہتمام تلقی دین(...


صحابہ پر تنقید نہیں

Date : Wednesday 24th of May 2023 05:39:21 PM

سوشل میڈیا پر اس وقت مشاجرات صحابہ کے حوالے سے  ایک ٹرینڈ چل رہاہے کہ" کون گروہ حق پر تھا اور کون نہیں ۔ کس نے زیادتی کی اور کون مظلوم ہے"۔ اس چیز نے اب اتنی بھیانک صورت حال اختیار کی ہے کہ اب ہرایرے غیرے صحابہ رضی اللہ عنھم کے اوپر تنقید کر رہا ہے۔ اس کی کئی وجوہ ہیں ۔ایک وجہ جو میری سمجھ میں آرہی ہے  وہ یہ ہے کہ  ناصبی اور خارجی خیالات کے حاملین استشراقی تحقیقی انداز کو اپنا کر ہمارے جدید تعلیم یافتہ طبقے کو متاثر کرتے ہیں۔ ان لوگوں  کا ہدف بھی یہی طبقہ ہے کیونکہ اس طبقے کو دینی علوم میں رسوخ نہیں ہوتا ہے ۔ امت کا یہ طبقہ اصول اور فروع میں تمیز نہیں کر پاتے ہیں ۔ ان کو معلوم نہیں ہوتا ہے کہ شریعت میں  اصل  کا مق...


دعوتی فہم اور اختلاف امت

Date : Thursday 18th of May 2023 06:24:11 AM

دین الٰہی کے ترجمان کی حیثیت سےزندگی کے ہر شعبے میں میں نبوی منہج کو مد نظر رکھتے ہوئے اپنے اخلاق کا مظاہرہ کرنامسلمان کا منصبی فریضہ ہے ۔ اہلیان ایمان میں جو بھی حضرات اس صفت سے متصف ہیں وہی دین کا کام مثبت طریقے سے کر پائیں گے اور ان کی دعوت کے خاطر خواہ نتائج بر آمد ہونگے۔ بصورت دیگر کاروانوں میں دعوت کا کافی شور ہوگا لیکن دعوت کے شعور  سے افراد خالی ہونگے ۔
اس وقت دعوت فہمی کا فقدان بایں معنی نظر آرہا ہے کہ لوگ دعوتی جوش و جذبہ رکھنے والے سادہ لوح نوجوانوں کی علمی توانائی کو فروعات کی تبلیغ پر صرف کرنے کی ترغیب دیتے ہیں۔ جبکہ مقاصد الشریعہ کے تحت فروعات کی تبلیغ کو اپنے فقہی دائرے میں مقید کر کے رکھنا وقت کی ایک اہم ضرورت ...


Mad'u Friendly Attitude

Date : Tuesday 25th of April 2023 01:39:31 PM

One of the principles of today's  business ethics is that a man who deals with the customers must be customer friendly.The counter boys who lack this quality are rejected by the CEO's of the Business Companies . The same is the case with Da'wah. The people who are not Mad'u friendly (friendly with the people who receive the call of  Da'ie) are abruptly rejected by the people.So it is necessary for the missionary people to always  have  cordial relations with their listeners, bear their irrelevant and  unexpected reactions with a cool mind.The Quran and the  Sirah of Prophet SAW teach us that love and compassion have a magnetic power by which the hearts of enemies can be conquered. Allah SWT says in Quran "(O Prophet), good and evil are not equal. Repel (evil) with that which is good, and you will see that he, between whom and you there was enmity, shall become as if he were a bosom friend (of yours)".Similarly Allah Says ,"and invite to the path of your Rabb (Cherisher and ...


اخلاق کیا ہیں؟

Date : Saturday 18th of March 2023 06:19:38 AM

اخلاق کیا ہیں؟
ﺍﺧﻼﻕ ﺧُﻠُﻖ ﮐﯽ ﺟﻤﻊ ﮨﮯ ﺟﺲ ﮐﮯ ﻣﻌﻨﯽ ﮨﯿﮟ ﻋﺎﺩﺕ، ﻃﺒﯿﻌﺖ، ﻣﺮﻭﺕ  (ﺍﻟﻤﻨﺠﺪ )ﺍﺧﻼﻕ ﺍﭼﮭﺎ ﺑﮭﯽ ﮨﻮﺗﺎ ﮨﮯ ﺍﻭﺭ ﺑﺮﺍ ﺑﮭﯽیعنیﺣﺴﻦ ﺧﻠﻖ ﺍﻭﺭ ﺑﺪ ﺧﻠﻖ۔ ﻟﯿﮑﻦ ﻋﺎﻡ ﻃﻮﺭ ﭘﺮ ﺍﺧﻼﻕ ﮐﺎ ﺍﺳﺘﻌﻤﺎﻝ "ﺧﻠﻖﺣﺴﻦ" ﮐﮯ ﻟﯿﮯ ﮨﻮﺗﺎ ﮨﮯ، ﺟﯿﺴﮯ ﮐﮩﺎ ﺟﺎﺗﺎ ہے ﻓﻼﮞ ﺷﺨﺺ ﺑﮍﺍ ﺑﺎ ﺍﺧﻼﻕ ﯾﺎ ﺧﻮﺵ ﺧﻠﻖ ﮨﮯ " ﯾﻌﻨﯽ ﺍﭼﮭﯽ ﺧﺼﻠﺘﻮﮞ ﮐﺎ ﻣﺎﻟﮏ ﮨﮯ۔ﺍﺧﻼﻕ ﮐﯽ ﺗﻌﺮﯾﻒ اس طرح کی گئی ہے کہ "یہﻧﻔﺲ ﮐﯽ ﻭﮦ ﺣﺎﻟﺖ ﺭﺍﺳﺨﮧ ہے ﺟﺲ ﺳﮯ ﺍﭼﮭﮯ ﯾﺎ ﺑﺮﮮ ﺍﻓﻌﺎﻝ ﺻﺎﺩﺭ ﮨﻮﮞ ﺑﻐﯿﺮ ﮐﺴﯽ ﻏﻮﺭ ﻭ ﻓﮑﺮ ﮐﮯ۔" ﯾﻌﻨﯽ ﺍﭼﮭﺎﺋﺊ ﯾﺎ ﺑﺮﺍﺋﺊ ﮐﯽ ﻭﮦ ﻋﺎﺩﺕ ﺟﻮ ﺁﺩﻣﯽ ﮐﮯ...


اپنا تعارف دوسروں کےسامنے کیسے کیا جائے؟

Date : Tuesday 7th of February 2023 10:31:17 AM

اپنا تعارف دوسروں کے سامنے کیسے کیا جائے

حضور صلی اللہ علیہ وسلم دوسروں کو اپنے سے مرعوب نہیں ہونے دیتے تھے ۔بلکہ لوگوں کو اپنے سے مانوس فرماتے تھے ۔ایک آدمی کو نبی صلی اللہ علیہ وسلم کے پاس لایا گیا ،حال اس کا یہ تھا کہ وہ خوف سے تھر تھر کانپ رہا تھا ،اپ صلی اللہ علیہ وسلم نے اس سے فرمایا  " ھون علیک ،فانی لست بملک ،انما انا ابن امراةتاکل القدید"( الکواکبی،طبائع الاستبداد 110) یعنی آرام سے رہو ،میں بادشاہ نہیں ہوں ،میں تو ایک عورت کا بیٹا ہوں جو سکھایا ہوا گوشت کھاتی تھی۔ 
اس عمل نبی صلی اللہ علیہ وسلم  سے یہ بات سمجھ میں آتی ہ...


امام ابوبکر جصاصؒ کاتفسیری منہج (قسط ۳)

Date : Tuesday 31st of January 2023 05:47:14 PM

امام ابوبکر جصاصؒ کاتفسیری منہج (قسط ۳) 
امام ابوبکر جصاص نے اپنے تفسیری منہج میں نو(9)امور سے تعرض کیاہے۔ڈاکٹر صفوت مصطفٰی نے اپنی کتاب”الإمام ابوبکر الجصاص ومنھجہ فی التفسیر“ میں اس پرتفصیلی بحث کی ہے۔یہاں میں اسکی تلخیص اپنیالفاظ میں پیش کروں گا۔بیچ بیچ میں اپنی توضیحات اور دوسریعلماء کی تحقیقات بھی درج کروں گا۔جو نو امور امام جصاصؒ  کے تفسیری منہج کوواضح بنیاد فراہم کرتے ہیں وہ یہ ہیں:
اول:تفسیر القرآن بالقرآن
دوم: تفسیربالماثوروتفسیربالرائیکیدرمیان موافقت
س...


امام ابوبکر جصاص (رح) کا تفسیری منہج۔قسط دوم

Date : Sunday 22nd of January 2023 02:44:55 AM

امام ابوبکر جصاص (ح) کا تفسیری منہج - قسط ( 2)
ہر چند امام ابوبکر جصاص کی تفسیر بنیادی طور پر احکامی نوعیت کی ہے یعنی انہوں نے اُن آیات کی تفسیر لکھی ہے جن میں یا تو وضاحتاً شرعی احکامات بیان ہوئے ہیں یا پھر استنباطاً  شرعی احکام برآمد ہوتے ہیں لیکن اس تفسیر میں صرف اتنا ہی نہیں ہے بلکہ اس میں شرعی احکام کے تفصیلی دلائل بھی ملتے ہیں ' آیات سے مستنبط ہونے والے نِکات و فوائد پر بھی روشنی پڑتی ہے' لغوی بحثیں بھی ہیں ' عقائد پر بھی سیر حاصل گفتگو کی گئی ہے - امام جصاص تفسیر کے مقدمے میں لکھتے ہیں :
" و قد قدّمنا في صدر هذا الكتاب مقدمة تشتمل علىٰ ذكر جُملٍ مما لا يسع جهل...


مقصد تخلیق انسان

Date : Monday 2nd of January 2023 05:56:43 PM

مقصد تخلیق انسان
    اللہ نے ابتداء میں تمام مخلوق کو پیدا کر کے سامنے لایا ان سے مخاطب ہوا اور کئی ایک باتوں سے پردہ اُٹھایا۔ اللہ نے اپنا ایک ارادہ ظاہر کیا کہ میں اپنی ذات کو چھپا نا چاہتا ہوں۔اور ظاہر میں کسی کو نظر نہیں آؤں گا یہاں تک کہ کسی کو بظاہر کھلے طریقے سے پتا نہ چلے گا کہ کون مالک ہے او ر کس کا مالک ہے۔ مخلوق کو بظاہر دور رہنا ہوگا جیسے وہ ایک اندھیرے میں ہیں لیکن انہیں اس ظلمت کو مٹانا ہوگا اور میں گھات لگا ان کا نظارہ کر
رہاہوں گا۔ لیکن ان کا کمال یہ ہوگاکہ وہ مجھے اس گھات میں رہنے کے باوجود دریافت کریں۔ اس بات کو آسمانوں، زمین اور پہاڑوں نے سنا۔خدا  کے اس اعلان کو جن...


غلط افکار کا رد کیسے کیا جائے؟

Date : Sunday 13th of November 2022 05:00:20 PM

مخالفین کے اعتراضات کو ذکر کیے بغیر اپنی بات کو مثبت انداز میں پہنچانا ہی حکمت کا تقاضا ہے ۔مخالفین جو شبہات پیدا کرتے ہیں ان شبہات کو عوام میں بیان کرنا نقصان دہ ثابت ہو سکتا ہے کیونکہ عوام کے ذہن میں یہ اشکالات اور سوالات ہوتے ہی نہیں ہیں جب ان کا ذہن اس طرف منتقل ہوتا ہے تو وہ پہلے ہی مرحلے میں ان اشکالات اور سوالات کو صحیح اور درست سمجھتے ہیں کیونکہ ان کے اندر اتنی علمی بساط ہوتی ہی نہیں ہے کہ وہ علمی بنیادوں پر ان اشکالات و سوالات کا رد کر سکیں ۔ یہی وجہ ہے کہ امام احمد رحمہ اللہ نےحارث محاسبی سے محض اس لیے تعلقات ختم کر دیے کہ انہوں نے رد معتزلہ میں کوئی کتاب لکھ دی تھی۔ امام رحمہ اللہ نے ان سے فرمایا کہ تم پہلے معتزلہ کے شبہات ل...


اِظہاردین

Date : Tuesday 25th of October 2022 06:52:26 AM

اِظہاردین
  نہایت ادب سے تجھے اے خدا
شب و روز کرتاہوں دل سے دعا
  یہ اظہارِ دین ہے مشیت تری
اسی میں صرف زندگی ہو میری
 وظیفہ میرا ہو یہ سب سے بڑا
فضل سے مجھے کر اسی پر کھڑا
تری چاہتوں پر مجھے کر فِدا
 بنادے یہی کام میرا مُدعا
اُمت توڑنا ہے بڑی اک خطا
سلیقہ مجھے جوڑ کا کر عطا
بٹے مسلموں کو میں یکجا کروں
یہی کام کرتے میں یارب مروں
  نواز ش وہاں کی بڑی اے خدا
جو اپنے فضل سے کرے تو عطا
ہمیں اس سے محروم ہر گز نہ کر
 ترا اس میں کچھ بھی نہیں ہے ضرر
 غریبوں کا ہوگا مفت میں بھلا
ہمیں صالحوں سے خدایا ملا
  خلاصہ ہے اظہ...


شیری (بارہ مولا) کی ایک دینی مجلس میں شرکت

Date : Sunday 16th of October 2022 05:33:53 PM

شیری (بارہ مولا) کی ایک دینی مجلس میں شرکت

ادارہ راہِ نجات شیری (بارہ مولا) کا ایک فعّال ادارہ ہے جو اپنے مقاصد کے تنوع اور بو قلمونی کی وجہ سے ملت اسلامیہ کے جمیع طبقات و افراد و اشخاص کو اپنے کارِ انسان تراشی و خدا شناسی کے دائرے میں سمیٹنے کی وسعت رکھتا ہے۔یہاں قلب کا گداز،زندگی کا راز اوراحساسات کا ساز آگہی کی نہروں کا روپ دھار کر معرفت الٰہی کے بحر ناپیدا کنار میں جذب ہو کر اپنی آخری قرار گاہ کی تلاش میں سرگرداں نظر آتا ہے۔
راہِ نجات نے جہاں کتب و رسائل کا گُہر نما تابناک سلسلہ شروع کرکے علمی آثار' مردانِ کار اور دُرِ شہوار کو سُفن و صحائف میں محفوظ کرنے کی تاریخ ر...


میرے استاد عبد الرحمٰن حُّراصاحب

Date : Thursday 18th of August 2022 07:18:27 AM

میرے استاد عبد الرحمٰن حُّراصاحب 
میں معلم ہوں کہ تدریس ہے میرا شیوہ 

نا مہذب کو میں تہذیب کی ضو دیتا ہوں 

منگلوار16 اگست2022عیسوی علی ا لصبوح  میں اپنے ایک شفیق استاد محتر م عبد الرحمٰن حُراصاحب کے ساتھ ملاقات کرنے کی غرض سے ان کے دولت کدہ پر حاضر ہوا ۔موصوف کے پاس میں نے ثانوی جماعتوں میں انگریزی مضمون پڑھا ہے اور بعد ازاں ان سے  مجھے بی۔ایڈ میں پھر سے استفادہ کرنے کا موقع ملا۔ میں موصوف کو بحیثیت ایک شفیق استاد جانتا ہوں۔ چونکہ نوے کی دہائی میں حالات ب...


 دشمنی میں خیر کا پہلو  

Date : Sunday 14th of August 2022 09:15:25 AM

 دشمنی میں خیر کا پہلو
محمد بن علی بن طبا طبا ایک ساتویں صدی کے آغاز کا مشہور مورخ ہے۔ یہ ابن طقطقی کے نام سے بھی مشہور ہے۔طقطقی کے لغوی معنی ”بہت تیز بولنے والے“کے ہیں۔ انہوں نے اپنی شہرہ آفاق کتاب ”الفخری فی الادآب السلطانیہ و الدول الاسلامیہ“میں حکماء کا یہ قول نقل کیا ہے ”کہ دشمن دو طرح کے ہوتے ہیں۔ایک وہ دشمن جو تم پر ظلم کرے اور دوسرے وہ جس پر تم  نے ظلم کیا ہو۔جس دشمن پر تم نے زیادتی کی ہو اس پر کبھی بھروسہ نہ کرو اور جہاں تک ممکن ہو اس سے بچو۔رہا وہ دشمن جس نے تم پر زیادتی کی ہو اس سے زیادہ ڈرنے کی ضرورت نہیں۔کیونکہ ایسا دشمن عموماً اپنی زیادتی شرمندہ و نادم ہ...


دشواری میں پھنسنا عقلمندی نہیں 

Date : Tuesday 2nd of August 2022 04:38:32 AM

دشواری میں پھنسنا عقلمندی نہیں 
اللہ تعالیٰ نے انسان کو عقل کی دولت سے نوازا ہے۔اس کا ایک بڑا تقاضا یہ ہے کہ انسان ہر اس معاملے سے دور رہے جس سے نکلنا مشکل ہوجائے۔ الفخری میں ایک شاعر کا قو ل نقل کیا گیا ہے کہ  ”اس چیز سے قریب ہونا ہی نہ چاہیے جس سے تم جلد ہی دور ہونا چاہو۔جب کسی چیز کا ارادہ کرو تو پہلے یہ دیکھ لوکہ اس میں پھنسنے کے بعد تم نکل کیسے سکو گے‘‘(الفخری: اصول ریاست اور تاریخ ملوک صفحہ نمبر95) بلکہ حکماء تو یہاں تک کہہ گئے کہ اس انسان کو چاہیے کہ اس چیز میں پھنسے ہی نہیں جس سے باہر نکلنے کے لیے غور و فکر کی ضرورت پڑے۔ حضرت معاویہؓ نے ایک ب...


برائی کے بدلے اچھائی، یہی دینداری ہے

Date : Monday 25th of July 2022 03:11:09 PM

برائی ​​​کے بدلے اچھائی۔ یہی دینداری ہے 

اللہ تعالی کا فرمان ہے کہ وَ الَّذِیۡنَ صَبَرُوا ابۡتِغَآءَ  وَجۡہِ  رَبِّہِمۡ  وَ اَقَامُوا الصَّلٰوۃَ  وَ  اَنۡفَقُوۡا  مِمَّا  رَزَقۡنٰہُمۡ سِرًّا وَّ عَلَانِیَۃً وَّ یَدۡرَءُوۡنَ بِالۡحَسَنَۃِ السَّیِّئَۃَ  اُولٰٓئِکَ  لَہُمۡ  عُقۡبَی الدَّارِ 
اور یہ وہ لوگ ہیں جنہوں نے اپنے رب کی خوشنودی کی خاطر صبر سے کام لیا ہے ، اور نماز قائم کی ہے ، اور ہم نے انہیں جو رزق عطا فرمایا ہے ، اس میں سے خفیہ بھی اور علانیہ بھی خرچ کیا ہے ، اور وہ بدسلوکی کا دفاع حسن سلوک سے کرتے ہیں ۔  وطن اصلی میں ...


مولانا محمد اکبر کرمانی صاحب مرحوم ہندواڑہ کشمیر

Date : Tuesday 19th of July 2022 05:29:04 PM

مولانا محمد اکبر کرمانی صاحب مرحوم ہندواڑہ کشمیر
    حضرت مولانا مفتی محمد اکبر کرمانی مفتی اعظم ضلع کپوارہ بارہمولہ سابقاً کرمانی ساداتی خاندان سے تعلق رکھتے تھے۔اس خاندان کی ایک شاخ دِوَسپورہ  ماگام ہندوارہ میں قیام پزیر ہوئی۔ جو مولوی خاندان میر واعظ شمالی کشمیر کے نام سے موسوم ہوئے۔حضرت مفتی صاحب کے والد محترم مولوی مقبول شاہ کرمانی فارسی اور عربی کے جیّدعالم دین تھے۔اُن کے والد مولوی رسول شاہ صاحب ِکرامات بزرگوں میں سے تھے۔جنکی کرامتیں زبان زد خلایق مشہور تھیں۔مولوی صاحب کے ایک چچامولوی عبداللہ کرمانی تھے جو شاہ صاحب یعنی مولوی انور شاہ صاحب لولابی ثم دیوبندی ک...


Attaining Piety

Date : Saturday 9th of July 2022 03:08:38 PM

Hajj is one of the five pillars of Islam. It is a mendatory religious duty for the muslims who can afford it financially and can undertake this duty with the condition that their families may not suffer in terms of financial assistance in his absence. This is the outward connotation of this Hukum.The inward connotation of this Hukum is to maintain special intentional bond (taqarrub) with Allah SWT. This thing can be understood by pondering upon the verse in which Allah SWT says that “Their meat will not reach Allah not will their blood, but what reaches him is piety from you .Thus have we subjected them to you that you may glorify Allah for that (to)Which He has guided you; and give good tidings to the doers of the good. “(Surah22Aayat37)
Here the word piety is the main word which determines the objective of the ritual of sacrifice being performed in the Hajj. The word “piety” literally means “being conscious or cognizant of Allah SWT”.Some times it gives the meaning of “fear of Allah”. Keeping it’s lexical meaning in consideration the people who conscious or fearing to Allah SWT are mutating” .But in the words o...


مجلسِ علمی (شیری، بارہمولا) کا چوتھا سمینار

Date : Tuesday 31st of May 2022 06:16:23 AM

مجلسِ علمی (شیری، بارہمولا) کا چوتھا سمینار 

میرے محترم بزرگ (جو اپنی علمی اور عملی سرگرمیوں کے لحاظ سے جوانوں سے کسی طور کم نہیں) جناب آسی غلام نبی وانی (مؤسس مجلس علمی) نے  دو تین ہفتوں پہلے فون پر اطلاع دی کہ21 مئی کو ایک سمینار بعنوان ''مقصدِ تخلیقِ انسانی'' منعقد کیا جانا تجویز ہوا ہے اور آپ کو لازماً اس میں شرکت کرنی ہے میں نے عذر پیش کیا کہ اس دن پہلے ہی ایک پروگرام میں شریک ہونا طے ہوا ہے لہٰذا میں شرکت سے معذور ہوں لیکن آسی صاحب ہار ماننے والوں میں سے نہیں ہیں۔انہوں نے فوراً کہا کہ ہم سمینار کی مجو...


Regaining Trust

Date : Wednesday 4th of May 2022 06:04:41 AM

Regaining Trust

It is very unfortunate that the people who run the Islamic  institutions like Bait-al-Maal, orphanage houses ,madaris and welfare  foundations have lost their trust in the society. There can be many reasons behind this Trust deficit scenario but the big and the most genuine reason is that the people who are running these institutions do not let the people or donors know about the income and expenditures of the institutions they are running. Without making them doubtful it is worthy to note that the institutions they are running belong to Ummah, so every individual of ummah has right to ask them whether they are utilizing it properly or not .We have historical evidences from the Sirah of caliphs (Khulafha) that they were being questioned by a layman about the things which belong to public property .Hazrat Umar was interrupted duri...


صحبتے با اہل علم (18)

Date : Saturday 23rd of April 2022 04:35:34 AM

عبدالقدیرفاضلی  صاحب(گامرو) بانڈی پورہ
   یہ1971عیسوی   کی بات ہے کہ احقر سوپور میں ٹرینگ کررہا تھا ایک دن اچانک ہمارے اساتذہ نے ہمیں سکول کے صحن میں جمع ہونے کے لیے کہا۔ اس دن محکمہ تعلیم کی ڈائر یکٹر صاحبہ بھی سینٹر میں تشریف لائی تھی۔ ہمیں غالب گمان ہو گیا کہ شائد ڈائریکٹر صاحبہ کو کچھ کہنا ہوگا۔ تما م اساتذہ اور زیر تر بیت اساتذہ جمع ہوگئے۔ سامنے مہمانوں کے لیے کُرسیاں لگائی گئیں اورہم فرشِ زمین پر بیٹھ گئے کہ یکا یک ایک باریش بزرگ ہمارے سامنے نمودار ہوگئے جن کے سر پر عمامہ تھا۔ہمیں بتایا گیا کہ ان کو طلباء کے سامنے تقریر کرنی ہے۔ ایک بلیک بورڈ بھی لگایا گیا...


امام ابوبکر الجصاص رحمہ اللہ اور ان کا تفسیری منہج

Date : Tuesday 12th of April 2022 12:31:57 AM

امام ابوبکر الجصاص رحمہ اللہ اور ان کا تفسیری منہج

 (قسط ۲)
ڈاکٹر شکیل شفائی
امام ابوبکر جصاصؒ چوتھی صدی ہجری کے بلند پایہ مفسر،' محدث،فقیہ، اصولی اور کئی مفید کتابوں کے مصنف رہے ہیں۔ ان کی ولادت 305ھ میں ہوئی۔ اصل نام  احمد بن علی تھا -  جصاص گچ اور چونے کی طرف نسبت ہے۔غالباً یہ خاندانی پیشہ رہا ہوگا۔امام ابوبکر ؒنے اپنے زمانے کے کِبّار علمائے احناف سے تحصیلِ علم کی۔ ان میں امام ابو الحسن کرخیؒ، ابو سہل زجاج،ابو سعید بردعیؒ اور موسیٰ بن نصر رازیؒ کا نام معروف ہے۔امام صاحب نہایت درجہ کے عابد، زاہد اور مرتاض بزرگ تھے۔...


امام ابن جرير طبری رحمہ اللہ

Date : Thursday 10th of March 2022 03:50:10 PM

 امام ابن جرير طبری رحمہ اللہ
تفسیری منہج ( قسط ٣)

(گزشتہ سے پیوستہ)

   

 علمِ لغت سے استدلال

 امام ابن جرير کسی لفظ کے متعدد معانی میں سے کسی ایک معنی کو متعین کرنے میں لغت کو پیش نظر رکھتے ہیں لیکن مجرد لغت پر انحصار نہیں کرتے بلکہ عرب شاعری اور قرائن سے بھی کام لیتے ہیں -  ...


امام ابن جریر طبری - تفسیری منہج

Date : Wednesday 2nd of March 2022 05:35:31 PM

امام ابن جریر طبری - تفسیری منہج
 

(قسط دوم)

تفسیر ابن جریر ماثور تفاسیر میں سب سے قدیم ہے - بعد کے قرنوں میں جتنی تفاسیر لکھی گئیں سب کسی نہ کسی لحاظ سے تفسیر طبری سے اثر پذیر رہی ہیں۔ اس تفسیر کا پورا نام ”جامع البیان عن تأویل آی القرآن“ہے۔علماء نے ہر زمانے میں اس کو بے حد سراہا ہے اور اسے ایک معتبر تفسیر قرار دیا ہے - امام ابن جریر کہتے ہیں۔”استخرت اللہ و سألت العون علی ما نویتہ من تصنیف التفسیر قبل أن أعملہ ثلاث سنین فأعاننی“  (سیر أعلام النبلاء)”میں نے اللہ س...


حدیث اور فن حدیث کیا ہے؟ 

Date : Sunday 27th of February 2022 05:49:19 AM

حدیث اور فن حدیث کیا ہے؟ 

حدیث کیلئے چند متقارب یا ہم معنی  الفاظ بھی مستعمل ہیں  مثلا روایت خبر اثر اور سنت۔  یہ تمام الفاظ اصحاب حدیث کی اصطلاح میں بطور مرادف رائج ہیں اور بکثرت باہم دیگر معنی میں استعمال ھوتے ہیں۔لیکن بعض ارباب حدیث نے ان اصطلاحات میں فرق کیا ھے۔ اس کی اصل وجہ علم حدیث کا تنوع ہے۔ جہاں تک روایت کا تعلق ہے،اس کا اطلاق  حدیث کے لغوی مفہوم پر ہوتا ھے۔کوئی واقعہ کسی کا قول اور فعل روایت کہلاتا ہے۔ باقی حدیث اثر خبر اور سنت کے معانی کے تعین میں ارباب سنت و حدیث میں  اختلاف ہے۔اللہ جل شانہ کے رسول صلی ...


صحبتے با اہل علم (17)

Date : Friday 25th of February 2022 02:51:46 PM

مولوی غلام حسن صاحب(گامرو بانڈی پورہ)
    قصبہ بانڈی پورہ کے قریب ایک گاؤں ہے جس کا نام گامرو ہے۔ یہاں پر ایک بزرگ تھے جس کا اِسمِ گرامی غلام حسن صاحب تھا۔اُن کے والد صاحب کا نام عبدالقادر تھا۔ اُن کے نام کے ساتھ لفظِ اعرج بولا جاتا تھا۔ اعرج عربی لفظ ہے اور اعرج لنگڑے کو کہتے ہیں۔ بچپن میں زمین پر گرنے کی وجہ سے اُن کی ایک ٹانگ ٹوٹ گئی تھی۔ انہوں نے اس کا اعلاج و معالجہ کرایا اور پھرچلنے کے قابل ہوگئے۔ حکیم نے اُن کو بتایا تھا کہ جتنا زیادہ وہ چلیں گے اُتنا ہی اُن کی ٹانگ میں قوت آجائے گی۔ چنانچہ اُس زمانے میں مال مویشی پالنے کا عمومی رواج تھا،لہٰذامولوی صاحب خوب چلتے ت...


جماعت تبلیغ کے مہر منیر پیر شمس الدین لولابی رح 

Date : Thursday 24th of February 2022 01:42:53 PM

جماعت تبلیغ کے مھر منیر پیر شمس الدین لولابی رح

ابتدائے آفرینش سے ھی حق و باطل کی کشمش رھی ھے  قران مقدس میں اس سلسلے میں کھیں اجمالا اور کھیں تفصیلا تبصرہ موجود ھے سورة المائدہ میں  ھابیل ع و قابیل کا قصہ قدرے تفصیل کے ساتھ مندرج ھے اور بنی اسرائیل  کو اس حوالے سے تنبیہ  بھی کی گئی ھے اور ھمارے لئے درس عبرت کے طور پر اس قصہ کو قرآن کے صفحات کی زینت بنایا گیا ھے شاعر مشرق کا تبصرہ ھے 

ستیزہ کار رھا ھے ازل سے تا امروز

 


Read More...

درس مثنوی (7)

Date : Tuesday 22nd of February 2022 05:14:33 PM

اللہ انبیائے کرام کو کیوں بھیجتا ہے؟
  

 یہ ایک طے شدہ بات ہے کہ کسی بھی حکیم کا کوئی کام حکمت سے خالی نہیں ہوتا ہے۔ اور حکیم کسی دانا یا عقلمند آدمی کو کہتے ہیں۔ اللہ کی ذات اتنی بڑی ہے،جو تما م عقلوں کو کنٹرول کرتی ہے۔ اس لئے فلسفیانہ زبان میں ایسی عقل کو عقلِ عقل کہتے ہیں۔اللہ صرف عقلوں کو کنٹرول نہیں کرتا ہے، بلکہ تما م عقلوں کا خالق ہے۔ اگر اللہ اس بات پر قادر ہوگا کہ وہ اچھی عقل والے ہی پید اکر سکے اور بے وقوف پیدا نہ کر سکے تو یہ اس کی قدر ت میں ایک نقص ہوگا نعوذ باللہ۔ اسی لیے اللہ کو خالق خیر وشر کہتے ہیں۔ ...


صحبتے با اہل علم (16)

Date : Sunday 20th of February 2022 05:03:02 PM

مولوی محمد عبدللہ چشتی صاحب بارہمولہ
  
 قصبہ بارہمولہ میں ایک محلہ ہے جس کو محلہ جلال صاحب کہتے ہیں۔ یہاں پر ایک بزرگ کی زیارت ہے جن کا اسم گرامی شیخ جلال چستی تھا۔ مصنفِ تاریخ حسن نے لکھا ہے کہ شیخ جلال صاحب شیخ عبدالرحمن چستی کے بیٹے اور خلیفہ تھے۔ ان پر مدہوشی اور مستی کا غلبہ رہتا تھا۔ اکثر محویت ِ ذاتِ الٰہی میں غرق ہوتے تھے۔ ان کے والد شیخ عبدالرحمن نے تھانیسر جا کر خواجہ نظام الدین سے خطِ ارشاد حاصل کیا اور واپس آکر وادیئ کشمیر میں چستی طریقہ کو رواج دیا۔ مورخِ حسن ...


صحبتے با اہل علم  (15)

Date : Thursday 17th of February 2022 04:42:49 PM

مولوی محمد یوسف شاہ صاحب مرحوم 

علاقہ نارواو  وادی کشمیر کے اندر ایک چھوٹیسی وادی ہے۔کچھاہل دانش اس کو Mountain Valley   یعنی پہاڑوں سے گھری ایک وادی بھی کہتے ہیں۔ یہ وادی دو مربع میل پر پھیلی ہوئی ہے اس کیساتھ اگر کا بالائی علاقہ بھی ملایا جائے تو اس چھوٹی سی وادی کا حجم تین مربع میل ہے۔ یہ ایک خوبصورت وادی ہے اور اس میں میر سید علی ہمدانی کے زمنے میں آئے ہوئے تقریباً ایک سو سادات کرام جن میں کچھ مستورات بھی ہیں مدفون ہیں۔ غلام حسن کھوہامی جو علاقہ بانڈی پورہ کشمیر کے ایک مشہور مورخ ہیں نے اپنی کتاب میں لکھا ہے کہ یہ علاقہ...


امام ابن جریر طبریؒ

Date : Wednesday 16th of February 2022 01:40:35 PM

امام ابن جریر طبریؒ
حیات،علمی خدمات اور تفسیری منہج

 قسط (۱)

  ہر چند دوسری صدی ہجری میں قرآن پاک کی تفسیر کی تدریس رائج تھی اور عام طور پر صِغار تابعین بعض صحابہ یا کِبار تابعین سے علمِ تفسیر حاصل کرتے تھے بایں ہمہ الگ سے قرآن کی تفسیر قواعد و اصولِ تفسیر کی روشنی میں مرتب کرنے کا رواج نہیں تھا۔ اس میں ابھی کچھ عرصہ درکار تھا۔ دوسری صدی اور تیسری صدی کے نصف اول میں تفسیری روایات اور تفسیری اقوال کی تحفیظ و تدریس کا  چلن جاری تھا۔ اس دور میں جن بزرگوں کا نام  تفسیری اقوال و ر...


درس مثنوی (6)

Date : Tuesday 15th of February 2022 05:13:47 PM

انسان نما شیطان کی دوستی سے بیکسی بہتر ہے 
 

 مولانا رومی ؒ کو خدائے پاک نے اعلیٰ درجہ کی ذہانت عطا کی تھی۔ وہ کوئی قصہ بیان کرتے ہیں، لیکن مقصد قصہ گوئی نہیں ہوتا ہے، بلکہ سچا ہو یا بناوٹی مولانا اس کے ذیل میں بڑی سبق آموز باتیں اور نتائج اخذ کرتے ہیں ۔ چنانچہ اسی قسم کا ایک قصہ ایک صوفی بزرگ اور دغا باز خادم کا بیان کرتے ہیں۔ لکھا ہے کہ ایک صوفی بزرگ تھا جو اکثر سفر میں رہتا تھا۔ ایک رات یہی صوفی بزرگ ایک خانقاہ میں ٹھہرا۔صوفی بزرگ نے سواری کے جانور کو ایک اصطبل میں باندھ دیا اور خود اپنے دوستوں کے ساتھ چبوترے ک...


حدیث اورفن حدیث کیا ہے؟ 

Date : Monday 14th of February 2022 04:33:49 AM

 حدیث اورفن حدیث کیا ہے؟ 
اسلام دین رحمت ہے اور منزل من اللہ دین ہے۔ ہر شعبہ حیات پر حاوی ہے زندگی کے جملہ مسائل کیلئے اس دین کامل میں تفصیلی ارشادات موجود ہیں۔  اس کامل دین کو سمجھنے کیلئے چار بنیادی مآخذ ہیں۔ قران جو بالتواتر امت تک پھنچا ہے۔  رسول اللہﷺکی ذات اقدس پر تییس 23 سال کے طویل عرصے میں نازل کیا گیا اور حسب ضرورت عقائد،  احکام،قصص، تاریخ،سیرت اور دیگر موضوعات پر کہیں اجمالا اور کہیں تفصیلا بحث کی گئی ہے۔اسی طرح دوسرا ماخذ سنت مطہرہ ہے  یعنی رسول اللہﷺ نے بحثیت شارح قران کی کامل ترین تشریحات فرمائیں۔ تیسرا ماخذ اجماع  ہے جسے انگریزی میں consensus کہتے ہیں۔صحابہ ؓکے دور...


صحبتے با اہل علم  (14)

Date : Wednesday 9th of February 2022 04:07:55 PM

صحبتے با اہل علم  14

ؒمحمد لطیف بیگ صاحب
  

 تاریخ اقوام کشمیرکے مصنف اپنی کتاب میں لکھتے ہیں کہ تحصیل اُوڑی (کشمیر) میں ایک معزز قطب شاہی اعوان خاندان عرصہئ دراز سے آباد ہے۔ اوڑی سے پونچھ کو جاتے ہوئے لب سڑک ایک موضع بلکوٹ آتا ہے وہاں مولوی غلام مرتضیٰ بیگ رہتے ہیں۔ ایک چھوٹے سے پہاڑی موضع میں مولانا کے پاس ایک مختصر سا عربی، فارسی اور اُردو زبان کا کُتب خانہ بھی ہے۔ سردار محمد رحیم بیگ شہید آپ کے پردادا تھے،جن کی اس علاقہ میں بہت شہرت ہے۔ اس خاندان کی ایک شاخ بارہمولہ ...


درس مثنوی(5)

Date : Tuesday 8th of February 2022 05:42:32 AM

درس مثنوی 

مجاہدہ کے بغیر مکاشفہ کی تمنا کرنا
    ایک بے وفوف آدمی ایک سفر میں حضرت عیسی ؑ کا ساتھی بن گیا۔ایک جگہ پہنچ کر اُس نے ایک گہری قبر میں ہڈیاں دیکھیں۔حضرت عیسیؑ سے کہنے لگا اے عیسیؑ خداکا وہ پاک نام جس کی برکت سے تم مردوں کو زندہ کرتے ہو، ذرا مجھے بھی بتا دو تا کہ میں بھی اِ ن ہڈیوں کو جاندار بنا دوں۔ حضرت عیسیؑ نے فرمایا ”خاموش بن جا یہ تیرا کام نہیں ہے کیوں کہ تمہارے سانسوں اور گفتار میں وہ قوت نہیں ہے۔ ایسا کام کرنے کے لیے ایسا سانس ہونا چاہیے جو بارش کے پانی سے زیادہ پاک ہو۔ خالی لاٹھی ہاتھ میں رکھنے سے کوئی شخص حضرتِ موسیٰ  ؑ جیسا ...


صحبتے با اہل علم(13)

Date : Monday 7th of February 2022 12:10:16 PM

مولانا فضل الرحمان صاحبؒ تُرک 
    محمد الدین فوق ایک کشمیر ی الاصل مؤرخ ہے۔ انہوں نے ستر کتایں تصنیف کی ہیں۔ کشمیر کے متعلق اُن کی تصانیف تاریخی اعتبار سے بڑا مقام رکھتی ہیں۔ چنانچہ تاریخ اقوام کشمیر اُن کی عالی قدر تصانیف میں شمار کی جاتی ہے، جس میں انہوں نے کشمیر کی تمام ذاتوں کے تاریخی حالات لکھئے ہیں۔ اُن کے پردادا کا نا م حسن ڈار تھا،جو ابتدائے شباب میں ہی کشمیر ہردو شیوہ سوپور سے پنجاب چلا آیا تھا۔اُس زمانے میں کشمیر میں افغانوں کی حکومت تھی۔ پنجاب میں ایک جگہ ہے،جس کا نام گھڑتل ہے۔ اور وہ وہیں آباد ہوا۔ آپ ضد1977  عیسوی میں پیدا ہوئے۔ ابتدائی تعلیم گھڑتل اور لاہور میں حاصل کی...


Editorial (اداریہ )

Date : Saturday 5th of February 2022 03:05:40 PM

فن خطابت اور معرفت الٰہی

جہاں تک فن خطابت کا تعلق ہے  یہ ایک ایسا فن ہے جس سے آدمی اپنے مافی الضمیر کو بہترین انداز میں زبان عطا کرتا ہے۔ اور یہی حسن بیان انسان کا طرہ ئامتیاز ہے۔اللہ تعالیٰ فرماتے ہیں کہ ”انسان کو حسن بیان کے اعزاز کے ساتھ پیدا کیا گیا۔چونکہ انسان کو پیدا کرنے کا مقصد اللہ عبادت بیان کر رہے ہیں اور عبادت کا ایک مفہوم علماء”معرفت“بیان فرماتے ہیں۔اس مفہوم کے تناظر میں اگر دیکھا جائے تو انسان کی تخلیق کا قصد اللہ تعالیٰ نے اسی لیے کیا کہ یہ میری ذات کی معرفت خودحاصل کرے اور اس کے ساتھ ساتھ دوسروں کو بھی کرائے۔
اس سلسلے میں انسان ک...


درس مثنوی (4)

Date : Saturday 5th of February 2022 10:30:15 AM

درس مثنوی (4)

کبھی دعاکے قبول نہ ہونے میں حکمت ہوتی ہے 

عام طور پر سانپ پکڑنے والے ایک خاص ترکیب سے سانپ کا زہر ختم کر دیتے ہیں اور اس طرح وہ اپنے آپ کو سانپ کی کاٹ سے محفوظ بنالیتے ہیں کسی وجہ سے ایک سانپ کا زہر ختم کرنے میں سانپ پکڑنے والے کو چوک ہو گئی اور وہ سانپ اس کی گھٹری میں زہر کے ساتھ پڑا رہا اور اس بات کا قوی امکان تھا کہ یہ سانپ لاعلمی کی وجہ سے اس سے کاٹ ہےاور اس طرح سپیرا ہلاک ہوجاتا ۔اچانک ایک...


صحبتے با اہل علم(12)

Date : Friday 4th of February 2022 05:20:26 PM

 
صحبت نمبر12

ؒ مولانا جلال الدین صاحب کشمیری

احقر نو عمری سے ہی اس بات کا متمنی رہتا تھا کہ مجھے زیادہ سے زیادہ علماء کرام و بزرگان دین کی صحبت و زیارت نصیب ہو جائے یہ  1984 عیسوی  کے آس  پاس   کہ اس شوق نے مجھے ایک دن مجبور کیا کہ میں صدر مفتی جموں و کشمیر مرحوم جلال الدین صاحب ؒ کی خدمت میں حاضری دوں۔ اس سے پہلے مجھے مرحوم کے ساتھ کبھی ملاقات نہیں ہوئی تھی۔مرحوم ان دنوں خانقاہ معلی سرینگر کے قریب ہی سکونت پزیر تھے۔ اور قدیم ترین مرکزی دار الفتویٰ خانقاہ معلیٰ سرینگر میں ہی موجود تھا۔ جب احقر  مکان کے صحن میں داخل ہوا تو ان...


درس مثنوی (3)

Date : Thursday 3rd of February 2022 01:23:34 PM

درس مثنوی3 

غیر مجتہد کا اجتہاد کرنا

مولانا رومی رحمہ اللہ نے ایک دلچسپ قصہ مثنوی میں تحریر فرمایا ہے۔لکھاہےکہ حضرت عمررضی اللہ عنہ کے زمانے میں رمضان کا مہینہ آیا۔اور بہت سارے لوگ ایک پہاڈ کو چوٹی پر گئے تاکہ روزہ کا چاند معلوم کرنے کی کوشش کریں۔لیکن بہت باریک بینی سے دیکھنے کے باوجود کسی کو اس روز چاند نظر نہیں آیا۔ایک شخص حضرت عمر رضی اللہ تعالیٰ کے پاس آیا اور بولا کہ اے عمر رضی اللہ تعالیٰ عنہ مجھے چاند نظر آیا ۔حضرت عمر رضی اللہ عنہ نے آسمان کی طرف دیکھا لیکن کہیں چاند نظر نہیں آیا ۔اس کے بعد اس شخص سے فرمایا کہ تمھارا چاند نظر آنا صرف ایک خیال ...


حضرت ابن عباس رضی اللّٰہ تعالیٰ عنہ

Date : Wednesday 2nd of February 2022 05:26:37 PM

حضرت عبداللہ بن عباس رضی اللہ عنہما

مفسرِ قرآن،ترجمان القرآن

 

حضرت عبداللہ بن عباس رضی اللہ عنہما آنحضرت صلی اللہ علیہ وسلم کے تایا زاد بھائی تھے - لوگ ان کو بحر کہتے تھے کیونکہ ان کا علم بہت وسیع تھا۔ یہ حبرالامۃ بھی کہلاتے تھے۔یہ جب پیدا ہوئے ت...


صحبتے با اہل علم (11)

Date : Wednesday 2nd of February 2022 04:47:45 PM

صحبت نمبر11

 مولانا عبید اللہ صاحب بلیاویؒ 

احقر جب پہلی بار بنگلہ والی مسجد بستی نظام الدین اولیاء پہنچا تو وہاں پر ایک نوارانی ماحول پایا۔ ایسا لگتا تھا کہ اس جگہ صاف دل اور نیک  باطن لوگوں نے ایک ایسی چھوٹی مو ٹی بستی قائم کی ہے جس میں ہر شخص دو سرے کا غمخوار دکھائی دیتا تھا۔ اس دور میں موبائل اور انٹرنیٹ کا نام و نشان تک بھی نہیں تھا،مجموعی طور پر خبر رسانی کا واحد ذریعہ ڈاک و تار کا محکمہ انجام دیتا تھا اور دیہاتوں میں یہ واحد نظام بھی اتنا سست ہوتا تھا کہ ایک دفعہ پورا چلہ لگانے کے بعد جب میں گھر پہنچا تو ڈاکیہ ہمارے گھر پر آیا اور اس کے ہا...


درس نمبر ۲ 

Date : Tuesday 1st of February 2022 12:26:54 PM

(گذشتہ سے پیوستہ) 

حواس ظاہری  وحواس باطنی 

 گر بَدیدے حس حیوان شاہ را 
پس بَدیدے گاؤ و خر  اللہ را 
پس بنی آدم مکرّم کے بدے 
کے بہ حسِّ مشترک محرم شدے 
(ترجمہ)
اگر حیوانی حس شاہ کو دیکھ سکی۔تو گاؤ اور خر (بھی) اللہ کو دیکھ لیتے۔ 
اگر دوسری حس تیرے لیے مخصوص نہ ہوتی۔حیوانی حس کے علاوہ،خواہش نفسانی سے بالا تر۔
تو بنی آدم مکرم کب ہوتے؟مشترک حسِ  کی وجہ سے محرم (راز)کب ہوتے۔
(تشریح)
انسان اور حیوان دونوں میں ظاہری حواس یکسان قسم کے نظر آتے ہیں  مثلاً انسان بھی سنتے ہیں اور حیوان بھی سنتے ہیں۔ان...


صحبتے با اہل علم (10)

Date : Monday 31st of January 2022 01:22:50 PM

ؒ مولانا انعام الحسن صاحب
 

جانور پروں سے اڑتے ہیں اور انسان کے پر اس کی ہمت ہے۔ مشہور مقولہ ہے ”ہمت مرداں مدد خدا“۔ہمت اور استقامت انسان کے مضبوط پر ہیں جن سے انسان کوئی بھی مہم سر کرسکتا ہے۔اپنے دعوتی سفر میں اللہ تبارک وتعالیٰ نے مولانا الیاس ؒ کو دو قیمتی جوہر عطا کیے ایک ان کے فرزند اور دوسرے مولانا انعام الحسن ؒ صاحب۔مولانا الیاس کے بعد دعوت و تبلیغ کی ذمہ داری بالترتیب ان ہی دو حضرات کے کندھوں پر پڑی۔اگر چہ دفعہ مولانا الیاس کے بعد دعوت و تبلیغ کی امارت کا بوجھ مولانا محمد یوسف صاحب ؒ کے کندھوں پر پڑا لیکن ان کی اچانک رحلت کے بعد اکابرین نے امارت کی ذمہ داری ...


  (1)درس مثنوی رومی

Date : Sunday 30th of January 2022 04:07:15 AM

(نوٹ)
 مثنوی شریف کا بہترین اردو ترجمہ قاضی سجاد حسین صاحب ؒ نے کیا ہے لہٰذا درس مثنوی کے دوران ہم ان کا ہی مسنتند اور صحیح  ترجمہ استعمال میں لائیں گے۔لیکن تشریح میں انہوں نے نہایت ہی اختصار سے کام لیا ہے اور فارسی زبان سے دوری کی وجہ سے کئی باتیں ناظرین کے سامنے پردہئ خفاء میں رہ جاتی ہیں جن کی تشریح کرنا ضروری بن جاتا ہے اسی صورت کے پیش نظر ہم درس مثنوی کا سلسلہ شروع کر رہے ہیں۔ 
 
درس نمبر ۱
 
حواس ظاہری  وحواس باطنی 

پنچ حسّے ہست جز ایں پنچ حس 
آں چو زرِّ سرخ و ایں حسہا چو مس 
اندراں بازار کاہل محشر اند 
حس مس را چوں حسِّ زر کے خرند 
حس ابداں قوتِ ظلمت فی خورد 


صحبتے با اہل علم (9)

Date : Friday 28th of January 2022 05:40:19 PM

صحبت نمبر9
 

ؒمولانا عمر پالنپوری 
 

 مولانا الیاس ؒ نے جب دعوت و تبلیغ کا کام شروع کیا تو رو رو کر اللہ سے دعائیں مانگی کہ اے اللہ اہل علم حضرات کا دل اس طرف مائل فرما دے۔آپ بذات خود علماء کے پاس جاکر حاضری دیتے تھے۔ اور ان کو نہایت ہی حکیمانہ انداز سے اس طرف متوجہ کرتے تھے۔مولانا بذات خود ایک بہت بڑے عالم تھے اور اللہ تبارک و تعالیٰ نے ظاہری علوم کے ساتھ ساتھ ایک ایسا علم عطا کیا تھا جس کو علم لدنی کہا جاتا ہے اور اس علم کا ثبوت ہمیں قرآن مجید سے ملتا ہے چنانچہ اللہ تبارک و تعالیٰ سورہ کہف میں آیت نمبر 65  میں فرماتا ہے”و...


صحبتے با اہل علم (8)

Date : Thursday 27th of January 2022 04:00:36 AM

صحبت نمبر8

ؒ مولانا ظہور الحسن صاحب 
ایک دینی سفر میں اللہ نے مجھے قصبہ تھانہ بھون اترپردیش پہنچایا۔یہ وہی جگہ ہے جہاں حکیم الامت موانا اشرف علی تھانوی صاحب مدفون ہے۔آپ 1943  عیسوی میں اس دنیا سے تشریف لے چلے۔احقرنے حضرت تھانوی سے متعلق ایک رسالہ بھی لکھا ہے جس میں اپنے آتھ اشعار کو عنوان بنا کر ان کے وہ آٹھ کارنامے بیان کرنے کی کوشش کی ہے جو اللہ تبارک و تعالیٰ نے ان سے انجام دلوائے۔مولانا عبد الولی شاہ صاحب کشمیری ؒ کے واسطے سے حکیم الامت میرے دادا پیر ہیں اللہ تبارک و تعالیٰ ان دونوں اصحاب علم کو کروٹ کروٹ جنت نصیب فرمائے۔ 
حکیم الامت حضرت تھانوی ؒ اور ان کے خلفاء سے جو عظی...


مقصد تخلیق کائنات "پر تبصرہ "

Date : Tuesday 25th of January 2022 05:24:28 PM

" مقصدِ تخلیقِ کائنات"
مصنف :  جناب آسی غلام نبی وانی صاحب
صفحات : ١٢٤
ناشر : مجلس علمی ' جموں و کشمیر

فلسفیانہ نقطہِ نظر سے دیکھا جائے تو بنی نوع انسان کو ان سوالات نے ہمیشہ ورطہِ اضطراب میں ڈال رکھا ہے کہ میں کون ہوں؟ مجھے کس نے بنایا اور کیوں بنایا؟ میرا مآل و مرجع کیا ہے؟ انہی سوالات کا جواب ڈھونڈنے کی کوشش میں فلاسفہ کی ایک جماعت پوری تاریخِ انسانی میں اُفتاں و خِیزاں سر گشتہ و سرگرداں رہی ہے لیکن بجز سنگریزوں کے ان کے ہاتھ کچھ نہ آیا -
مولانا ابوالاعلیٰ مودودی مرحوم نے ایک خوبصورت بات لکھی ہے کہ جن فلسفیانہ گُتھیوں کو سُلجھانے میں (تاریخ کے عظیم) دماغ ضائع ہوگیے ان کو قرآن کریم نے چھوٹے چھوٹے جملوں می...


صحبتے با اہل علم(7) 

Date : Tuesday 25th of January 2022 07:42:54 AM

صحبت نمبر7

ؒمولانا طلحہ صاحب سہارنپوری

آپ شیخ زکریا سہارنپوری کے فرزند ارجمند تھے۔اور شیخ زکریا  ؒ برصغیر کیی وہ عظیم ہستی ہے جو عالمی دینی محنت میں مولانا الیاس کے معاون و مددگار بنے۔ آپکے والد کا نام مولانا محمد یحییٰ تھا۔وہ بھی ایک بہت بڑے عالم دین تھے۔آپ کو اللہ نے طلحہ صاحب جیسا نیک اور صاحب علم فرزند عطا فرمایا۔اپنے دعوتی سفر کے دوران مجھے شیخ زکریا ؒ سے ملاقات کرنے اور ان سے مستفید ہونے کی بڑی تمنا تھی اور جب میں ان کے در دولت پر حاضر ہوا تو مولانا طلحہ صاحب نے بتایا کہ شیخ مدینہ طیبہ گئے ہیں۔در اصل شیخ زکریا ؒ صاحب دلی تمنا رکھتے تھے کہ انہیں مدینہ طیبہ میں جنت البقیع کی مٹی نصیب ہوجائے۔م...


صحبتے با اہل علم (6)

Date : Sunday 23rd of January 2022 07:54:10 PM

صحبت نمبر6

مولانا انظر شاہ کشمیریؒ 

آپ مولانا انور شاہ کشمیریؒ کے فرزند ارجمند تھے۔بچپن میں ہی والد کا سایہ سر سے اٹھ گیا تھا۔اللہ تعالیٰ نے آپ کو اعلیٰ قسم کی صلاحیتوں سے نوازا تھا۔اپنے دیوبند کے سفر کے دوران احقر ان سے ملنے کے لیے ان کی کوٹھی پر ملنے کے لیے گیا لیکن وہاں پہنچنے پر معلوم ہوا کہ گھر سے دار العلوم کی طرف جانے والے ہیں کیونکہ مولانا دار العلوم (قدیم) کے ایک استادبھی تھے۔ مولانا نے فرمایا کہ آپ بعد نماز مغرب مجھ سے انار کے اس درخت کے پاس مل سکتے ہیں جہاں پر دار العلوم کی ابتداء ایک شاگرد اور ایک استاد سے ہوئی تھی قریب ہی ایک چھوٹی مسجد تھی...


Editorial(اداریہ )

Date : Sunday 23rd of January 2022 04:07:49 AM

آکر عروج کیسے گرا ہے زوال پر
حیراں ہو رہا ہوں ستاروں کی چال پر  (زیبؔ) 
تحریکوں میں نئے افراد کا آنا ایک فطری عمل ہے۔ کوئی تحریک خواہ کتنی ہی کمزور کیوں نہ ہوئی ہو اس میں جو مخلصین کی محنتیں لگی ہوتی ہیں ان محنتوں کے باعث کوئی دینی تحریک راتوں رات صفحہ   ہستی  سے معدوم نہیں ہوتی۔لہٰذا تحریک میں نئے احباب کے آنے پر اس تحریک کے ذمہ داروں کو زیادہ خوش نہیں ہونا چاہیے۔کسی تحریک کے لیے سب سے زیادہ قابل اطمینان بات یہ ہوتی ہے کہ اس  کے اکابرین میں اتفاق ہو۔وہ آپس میں سر پھٹول نہ کریں اور تحریک کے ساتھ دیرینہ وابستگی رکھنے والے افراد تحریک کے ذمہ داروں سے دوری اختیار نہ کریں۔اگر تصویر کچھ اس کے برعکس نظر آرہی ہے تو سم...


صحبتے با اہل علم (5)

Date : Friday 21st of January 2022 05:42:01 PM

صحبت نمبر5

  ؒازہر شاہ قیصر
حضرت مولانا انور شاہ کشمیری کے دو فرزند تھے۔ایک کا نام ازہر شاہ صاحب تھا اور دوسرے کا نام انظر شاہ صاحب تھا۔ان دو بھائیوں میں فرق صرف یہ تھا کہ ازہر شاہ صاحب ایک اعلیٰ پایہ کے ادیب تھے اور ادب کے دائرہ میں رہتے ہوئے خاندانی شرافت کا مجسمہ بھی تھے لیکن انظر شاہ صاحب ایک اعلیٰ پایہ کے عالم دین تھے۔آپ پہلے دار العلوم دیوبند(قدیم)میں بھی بحیثیت استاد کام کرتے تھے پھر جب باہمی اختلاف کی وجہ سے دار العلوم (وقف) وجود میں آیا تو آپ نے زندگی کے بقیہ ایام اسی دار العلوم میں گذارے۔ 
جیسا کہ اوپر تذکرہ ہوا کہ ازہر شاہ صاحب ایک اعلیٰ پایہ کے ادیب تھے اور ا...


(4) صحبتے با اہل علم 

Date : Thursday 20th of January 2022 01:32:56 PM

 

صحبت نمبر4

حضرت مولانا قاری محمد طیب صاحب ؒ 

  یہ 1976عیسوی کی بات ہے کہ ایک دعوتی سفر میں احقر دیوبند پہنچا۔چند دن دیوبند میں ٹھہرنا نصیب ہوا۔اُن دنوں قاری طیب صاحب ؒ دار العلوم دیوبند کے مہتمم تھے۔دل میں ان کی زیارت کرنے کا بڑا شوق تھا۔ لیکن وہ کہیں سفر پر گئے تھے۔ اور نائب مہتمم مولانا مرغوبا الرحمٰن صاحب دیوبند میں موجود تھے۔ ان کی زیارت نصیب ہوئی۔ مصافحہ کیا اور خیر خبر کی حد تک ہی بات چیت ہوئی۔اس کے بعد دار العلوم کے کمرے میں ہم پہنچے جہاں مولانا اظہر شاہ قیصر تشریف فرما تھے۔۔ان کی ملاقات نصیب ہوئی۔وہ ان دنوں دار العلوم دیوبند کا ماہوار رسالہ نکالتے تھے۔اسی کمرے میں مولان...


(3) صحبتے با اہل علم

Date : Wednesday 19th of January 2022 07:43:48 AM

 3 صحبت نمبر 
 

 ؒ مولانا منظور احمد نعمان 
گذشتہ عیسوی صدی کے ممتاز علمائے دین میں مولانا منظور احمد نعمانی ؒکا نام  سنہری حروف سے لکھنے کے قابل ہے۔کیونکہ اس دور میں لوگوں تک بات پہنچانے کے ذرائع موجود نہیں تھے جو آجکل ہر شخص کو میسر ہیں۔اس دور میں نشر و اشاعت کے دو ذرائع موجود تھے۔حضرات علمائے کرام یا تو اپنی زبان کے ذریعے اللہ کا پیغام بندوں تک پہنچاتے تھے یا رسائل و کتب کے ذریعے۔مولانا نعمانی  ؒ نے  ان دونوں کو خوب استعمال کیا۔آپ ایک اعلیٰ پایہ کے مبلغ،عالم اور صاحب قلم تھے۔ چنانچہ آپ نے مختلف موضوعات پر کتابیں لکھیں۔آپکے استادوں  میں ح...


(2) صحبتے با اہل علم

Date : Tuesday 18th of January 2022 05:47:56 AM

2صحبت نمبر
سید ابو الحس علی میاں ندوی ؒ 
گذشتہ عیسوی صدی کے ممتاز علمائے دین میں سے حضرت علی میاں ندوی ؒ ایک ممتاز شخصیت کے مالک تھے۔ آپ ایک علمی گھرانہ کے چشم و چراغ تھے۔ قصبہ رائے بریلی یوپی میں پیدا ہوئے اور ندوۃ العلماء لکھنو کے سرپرست تھے۔ آپ دل سے اکابرین دیوبند و سہارنپور کے قدر دان تھے اور اس نیم برصغیر کے تقریباً سارے ہی علمی حلقوں میں نہات ہی قدر کی نگاہوں سے دیکھے جاتے تھے۔ آپؒ اور مولانا منظور احمد نعمانیؒ ہم عصر تھے اور ملک کے تقسیم ہونے کے بعد آپ دونوں حضرات پہلے جماعت اسلامی پھر تبلیغی جماعت کے ساتھ منسلک رہے۔ دونوں جماعتوں میں آپ قدر کی نگاہوں سے دیکھے جاتے تھے۔آپ  دونوں حضرات علم و عمل کا مجسمہ تھے۔ مو...


کیا آپ نے اس کتاب کو پڑھا ہے؟

Date : Monday 17th of January 2022 12:23:34 PM

ہرچند طبعیت ٹھیک نہیں ہے پھر بھی للہ فی اللہ یہ چند سطور اپنے احباب و أصدقاء کے استفادے اور حصولِ نفعِ دینی کے لیے قلمبند کر رہا ہوں -آپ میں سے بہت سے لوگوں نے ڈاکٹر مصطفیٰ سباعی رحمہ اللہ کی شہرہ آفاق کتاب " السنة و مكانتها في التشريع الإسلامي"  کا مطالعہ کیا ہوگا - برسوں پہلے میں نے بھی اس کتاب کی ورق گردانی کی تھی - یہ کتاب تحفیظِ سنت ' تأصیلِ تاویلاتِ فاسدہ' انہدامِ افکارِ مستشرقین اور ازالہِ شکوک و وساوس کے علاوہ علمِ اصولِ حدیث ' اس کی تاریخ تدوین' منکرینِ حدیث کے ابتدائی نقوش ' فِرَق ضالّہ کا حدیث میں شبہات پیدا کرنے کی نامسعود کاوشیں اور صحابہ کرام رضی اللہ عنھم کی ذوات مقدسہ کو داغدار کرنے نیز محدثین کے تئیں استہزا و اہانت ...


(1) صحبتے با اہل علم

Date : Monday 17th of January 2022 06:44:48 AM

استاذی پیر غلام رسول چشتیؒ

بنیادی طور پر تمام علوم کو دو حصوں میں تقسیم،یا جاسکتا ہے۔ایک علم کا دائرہ دنیاوی علوم پر محیط ہے اور دوسرے علم کا احاطہ دینی علوم پر مشتمل ہے۔جیسے دنیاوی علوم کی مختلف شاخین ہیں اور ہر شاخ کے اپنے اپنے ماہر ہوتے ہیں ویسے ہی دینی علوم کے بھی ماہر ہوتے ہیں اور ان علوم کی بھی مختلف شاخیں ہوتی ہیں اور ہر شاخ کا کوئی نہ کوئی بڑا ماہر ہوتا ہے۔لیکن اللہ کے بندوں میں سے کچھ مخصوص بندے ایسے بھی ہوتے ہیں جو اگر چہ ہر شاخ کے ماہر نہیں ہوتے ہیں لیکن ضرورت کی حد تک انہیں ہر...


Editorial

Date : Sunday 16th of January 2022 05:43:53 PM

As it is now a known state of affairs that Tabligi Jama'at -one of the big da’wah movement of the world has been split into two factions. One is known as Amarat Faction and the other is known as Shooraiee Faction. Some people say that it is the ikhtilaf of Intizam and some are of the opinion that it is the iktilaf of interpretation. What so ever it is it is not a good sign for this  movement through which our elders were expecting khair e kathir. 
This conflict has now enterd into the houses of the people who are affiliated with this movement. There are some  reports that father favours shura and son favours Amarah.This thing affected their filial relationship to the great extent. 
Conflict of opinion amoung the elders should not reach to such an extent that the followers of both sides will expel one another from their respective mosques.The issue needs to be resolved immediately .Ulema and Sulaha from both sides should asses the issue and should come up with the best solution that will be acceptable to both sections. 

 


Peer Shams-ud-Din Lolabi RA

Date : Thursday 13th of January 2022 01:32:34 PM

 کشمیر اپنی خوبصورتی کی وجہ سے پورے عالم میں مشہور ہے اور یہ خوبصورتی اس خطہئ جنت نظیر کو اللہ تبارک و تعالیٰ نے عطا کی ہے۔ اِسی خوبصورتی کے پیش نظر ایک فارسی شاعر نے کہا ہے کہ

است اگر فردوس بروئے زمین

          ہمیں است و ہمیں است وہمیں است

ترجمہ:۔ اگر روئے زمین پر کہیں فردوس ہے تو یہی ہے۔یہی ہے۔یہی ہے۔

          یہ ت...


کورونابیماری ایک تنبیہ ہے عذاب نہیں

Date : Tuesday 9th of November 2021 02:50:59 AM

کورونا بیماری ایک تنبیہ ہے عذاب نہیں

عقائد کے اعتبار سے بندگان خدا کی قسمیں  دنیا کے اندر مختلف قسم کے لوگ پائے جاتے ہیں۔کچھ لوگ اس کائنات کو بے خدا کائنات مانتے ہیں ایسے لوگوں کو ڈکشنری کی زبان میں دھریہ Athiest   کہتے ہیں۔کچھ لوگوں کا خیال ہے کہ خدا کی اس کائنات میں کچھ شرکاء partners    بھی ہیں ان کو مشرک   polythiest   کہتے ہیں،کچھلوگ کائنات کو صرف ایک خالق اور مالک کی تخلیق مانتے ہیں۔ کچھ لوگ کائنات کو صرف ایک خالق اور مالک کی تخلیق مانتے ہیں ان کو مواحد کہتے یعنی  Monothiest  کہتے ہیں۔ان لوگوں کا عقیدہ یہ بھی ہے کہ کائنات پیدا کرنے کے بعد وہ اس سے لاتعلق نہیں ہوگیا۔اس کے علا...


Contemporary Writing and the Responsibilities of Muslim Scholars

Date : Thursday 7th of October 2021 04:37:58 AM

تحریر و تصنیف کا عمل انسانی فکر و نظر کی ترسیل و تبلیغ میں ایک اہم ترین وسیلہ اور سب سے زیادہ مؤثر ذریعہ ہے۔ابتدائے آفرینش سے ہی انسان نے تحریر کے ذریعے اپنے خیالات کو دوسرے ہم جنسوں تک پہنچانے کی سعی  کی ہے۔اگر چہ ما فی الضمیر  کی ادائیگی پہلے صور و اشکال کے ذریعے ہوتی رہی،لیکن بہت جلد حروف نے ان کی جگہ لی اور پھر لکھنے پڑھنے کا وہ طویل سلسلہ چل پڑا جو آج کے دور تک ممتد ہے اور مستقبل پر بھی سایہ فگن ہو رہا ہے۔

    تحریر و تصنیف کا کام پہل...


Darse Mathnavi

Date : Thursday 7th of October 2021 04:20:26 AM

(حق پرستوں اور حق مخالف لوگوں کا الگ الگ انجام)


    گذشتہ قصہ میں مولانا رومی ؒ نے ایک مکار یہودی وزیر کی مکاری کا قصہ بیان کر کے ثابت کر دیا ہے کہ ایک حاسد اور کینہ پرور انسان کس طرح پہلے اپنے آپ کو اورپھر بندگانِ خدا کومصائب میں مبتلاکر نے کی مذموم کوشش کرتا ہے اور ایسا کر کے خود بھی کس طرح اپنا حلیہ بھی بگاڑتا ہے اور دوسروں کے آزا ر کا سبب بھی بن جاتا ہے اس کے بر عکس حق پرست اور انصاف پسند کس طرح اپنی راحت کا سبب بن جاتا ہے اور دوسروں کے لیے بھی راحت کے دروازے کھولنے کا سبب بن جاتا ہے۔اس سلسلے میں مولانا ؒ نے عیسائیوں کی ایک حق پرست جماعت کا تذکرہ کیا ہے جو انجیل کا مط...


اقبال اور تقلید - ایک تحقیقی جائزہ

Date : Wednesday 6th of October 2021 03:32:57 AM

 جہاں تک لفظ تقلید کا تعلق ہے یہ لفظ قَلَدَ باب نَصَرَسے مشتق ہے لغت میں اس کے ہم معنیٰ الفاظ رفق ،لواہ یا الحبل آئے ہیں اور عربی یہ میں لفظ مختلف طرق سے استعمال ہوتا ہے ۔مثلاً عربی میں کہا جاتا ہے ’’قلد البعیر‘‘ یعنی اونٹ کی گردن میں کھینچنے کے لئے پٹا ڈالنا،اسی طرح ’’قلدہٗ فی کذا ‘‘یعنی اس نے اس کی فلاں بات میں بغیر غور و فکر کے پیروی کی یا کہا جاتا ہے’’ قلدہٗ فیما یقول او یفعل من غیرِ حجۃوَّلا دلیل ‘‘ اس نے اس کے قول و عمل پر بغیر کسی دلیل اور حجت کے عمل کیا ۔اگر ہم صرف لغوی معنوں کی رو سے ہی دیکھیں تو تقلید کرنے کے دو ہی وجوہ ہو سکتے ہیں ایک یہ کہ مُقَلَّدیعنی جس کی تقلید کی جاتی ہے فہم ،دیانت ،تقویٰ ،تدین غرض ہر اعتبار سے اتن...


Identity lies in cultural alternatives

Date : Friday 17th of September 2021 02:40:42 PM

IDENTITY LIES IN CULTURAL ALTERNATIVES 
It is bur natural that all cultural or social orders of the world possess certain distinguishing traits by means of which the members of one group or order recognize the members of other group or order .It is why that Islam forbids imitation in terms of Language, dress, mode of living and mark of culture .Because Islam wants to preserve and maintain cultural identity .Though the Prophetic expression “He who apes a people will be counted with them” is sufficient and enough in this regard. Some more traditions will make our statement strong and reliable. It has been narrated by Imam al Muslim in his famous book al-Muslim in the book of DRESS and FASHION that Hazrat Umar ,the second Khalifa ,wrote to Utba bin Farqad the governor of Azerbaijan “take care ,do not adopt the dress of unbelievers”. Similarly Hazrat ibn Umar (RA) narrated the Prophet Muhammad (SAW) said “Do the Opposite of what the pagans do”. Whenever Ibn Umar performed the Hajj Or Umrah ,he used to hold his beard with his hand and cut whatever hair remained, after that Ibn Umar also reports that Prophet Muhammad( SAW) said “Cu...


It is torture to follow the footsteps of others براہ دیگراں رفتن عذاب است

Date : Friday 17th of September 2021 02:35:08 PM

(IT IS TORTURE TO FOLLOW THE FOOTSTEPS OF OTHERS)


Islam due to its living and energetic sprit dose not tolerate imitation of its followers to any external source. Because in the words of M.Asad, “Only very superficial people can believe that it is possible a civilization in its external appearance without being at the same time affected by its spirit”  According to him, “a civilization is not an empty form, but a living energy .The movement we begin to accept a form, its inherent currents and dynamic influences set to work in ourselves and mould slowly imperceptibly our whole mental attitude.”  So it is in perfect appreciation of this experience that the Prophet (SAW) said:
من تشبہ بقوم فھو منھم(الحدیث مسند احمد بن حنبل ،سنن ابی داود)
“Whoso imitates other people becomes one of them” (Musnad-Ibn-Hanbal, Sunnan Abi-da’ud)
Islam is “like a perfect work of architecture .All its parts are harmoniously conceived to complement a...


Islam a complete code of culture

Date : Friday 17th of September 2021 02:20:35 PM

God says, “Who so seeketh as religion (Al-Din) other than the surrender (to Allah), It will not be accepted from him” {3:85}.Here Allah says acknowledged and accepted way of life is Al-Islam. Here the word Al-din widens its range. In other words we can say that Allah (SWT) demands us to follow Al-Islam in its Holistic sense (i.e.) Al-Din .Al-Din has been defined in al.Mu’jam al Wasit as
According to Al-Wasit, Al-Din encompasses not only verbal confession and belief (according to confession) but it encompasses all the below captioned areas of human life:
Al-Sirah (conduct,attitude, behavior, way of life)
Al-‘Aadah (habit ,customs)
Al-Hal(condition ,state) 
A- War’a( piousness, godliness)
Al-Muluk(supreme,authority,sovereignty)
Al-Qazu’ (canonical law)
Al- Hukum (the Absolute authoritarian)
Al –Tadbir (the planning,the politics) as well.
When we take al-Din in this Holistic manner, consequently the habits, customs, conduct and behavior etc .come under the jurisdiction of al-Islam. So Islam from its very root salama (سلم) dose not only stands for way of life;...


Culture in Islam

Date : Friday 17th of September 2021 02:10:50 PM

The word culture has been derived from the Latin word “cultura” which means “to till, to cultivate”. The word “till or cultivate” means to prepare the land by ploughing till it becomes plain, fertile and productive. To cultivate one’s mind means “To develop ones mental capacity to the extent that one may be able to think as a responsible citizen. Similarly to cultivate ones manners, means to teach someone best morals and the way of doing things in a best possible way. When the same word is used in its social and religious perspective it provides the sense of developing individuals /stimuli’s manners, habits, beliefs, knowledge in short material and non-material aspects of life in accordance with the religion or society/community one belongs to.       

Culture: definitions and meaning 
Let us try to know how different authorities and scholars have defined the term culture.
According to Arnold Mathew, “the best that has been taught and known is culture. Culture includes the way of life, the habits, the manners, the very tones of voices, the literature, and ...