مضامین /   Articles

میر واعظ کشمیر مولانا محمد یوسف شاہ صاحبؒ (2019-03-25)

میر واعظ کشمیر مولانا محمد یوسف شاہ صاحبؒ

فاضل دیوبند مولانا محمد یوسف شاہ صاحب کے والد محترم کا نام رسول شاہ صاحب تھا ۔رسول شاہ صاحب سات برس کی عمر میں حافظ قرآن ہوگئے تھے ۔ مولانا رسول شاہ صاحب ۱۳۲۷ھ یعنی ۱۹۰۹ء میں وفات پاگئے ۔والد صاحب کی وفات کے وقت مولانا یوسف شاہ صاحب بارہ تیرہ سال کے تھے ۔اس لحاظ سے آپ کی تاریخ پیدائش ۱۸۹۶ ء بن جاتی ہے ۔ مولانا محمد یوسف شاہ صاحب مولانا انور شاہ صاحب کے شاگرد تھے ۔ مولانا عبدالکبیر رینہ صاحب آپ کے ہم جماعتی تھے ۔ ابتدائی تعلیم اپنے والد ماجد مولانا رسول شاہ صاحب اور مولانا محمد حسین شاہ صاحب وفائیؔ سے حاصل کی ۔ لیکن والد صاحب کی وفات کے بعد باقاعدہ اسلامی تعلیم حاصل کرنے کے لئے دارالعلوم دیوبند تشریف لے گئے ۔اس وقت دارالعلوم دیوبند میں مولانا انور شاہ صاحب ؒ مسند درس پر جلوہ افروز تھے ۔شاہ صاحبؒ نے نہ صرف بذات خود آپ پر ازراہ شفقت اپنا ہاتھ رکھا بلکہ دیوبند کے دوسرے اساتذہ کو بھی آپکا اور آپکے خاندان کا تعارف کرایا ۔سات سال تک مولانا انور شاہ صاحبؒ کے زیر سایہ تعلیم دین میں مصروف رہے ۔آخری سال پنجاب یونیورسٹی سے مولوی فاضل کا امتحان پاس کیا ۔اسکے بعد واپس اپنے آبائی وطن سرینگر تشریف لائے ۔واپسی پر آپ نے سلسلہ وعظ شروع کیا۔اور مدرسہ عربیہ اورینٹل کالج انجمن نصرت الاسلام میں بحیثیت پرنسپل تعلیمی خدمات کا سلسلہ جاری رکھا ۔میر واعظ مولانا احمد اﷲ صاحب کی وفات کے بعد آپ قومی خدمات کی طرف متوجہ ہوئے۔ ۱۹۴۷ء میں آپ مہاجر بن گئے۔ پھر آزاد کشمیر میں ایک دفعہ وزیر تعلیم اور دو مرتبہ صدر بن گئے ۔ آپ نے کشمیری زبان میں قرآن شریف کا بہترین ترجمہ کیا اور مختصر تفسیر بھی قلمبند فرمائی ۔آخر ۱۹۶۸ء میں آزاد کشمیر میں وفات پائی ۔

(بحوالہ ماہنامہ راہ نجات بارھمولہ)


درج ذیل مقالہ پڑھنے کے لئے ہیڈ لائن پر کلک کریں



Our Total Visitors

You can also send your Articles/Research papers and reviews to RNB on this mail salikbilal.rnb@gmail.com